بھیرہ۔ میانی رورل ہیلتھ سنٹر میں پچھلے 8 ماہ سے کھانسی کا سیرپ ہی دستیاب نہیں

بھیرہ۔ میانی رورل ہیلتھ سنٹر میں پچھلے 8 ماہ سے کھانسی کا سیرپ ہی دستیاب نہیں کچھ ہفتوں سے بینڈیج بھی نہیں آرہی
سٹاف کا کہنا ہے کہ ہم اپنے پاس سے بینڈیج منگا کر استعمال کر رہے ہیں
الٹراساؤنڈ کی مشین پچھلے پانچ سال سے پڑی پڑی خراب ہو رہی ہے پتالوجسٹ ڈاکٹر یہاں نہیں موجود
اسٹاف کو گورنمنٹ کی طرف سے کوئی حفاظتی کیٹس اور ماسک مہیا نہیں کیے گئے۔ سٹاف
دو بجے کے بعد ایمرجنسی ڈاکٹر شام اور رات کے وقت موجود نہیں ہوتا ڈسپنسر خود ہی چیک کرکے دوائی دیتے ہیں یا کبھی کہتے ہیں ڈاکٹر موجود نہیں
بھیرہ۔ اہل علاقہ کا اہل احکام سے مطالبہ کیا ہے کہ اس چیز کا نوٹس لیا جائے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.