fbpx

”پیٹ اور آنتوں کی مکمل صفائی تما م گندگی صاف“

آپ کو بتائیں گے کہ آپ کیسے اپنے پیٹ اور آنتوں کی صفائی کر سکتے ہیں

اور بہت ساری بیماریوں سے بچے رہ سکتے ہیں اگر آپ کا پیٹ صبح کھل کر صاف نہیں ہوگا تو آپ بہت ساری بیماریوں کا شکار ہو جا ئیں گے جیسے آنکھوں کے گرد سیاہ ہلکے جگر کی خرابی اور با لوں کا گر نا وغیرہ اگر آپ چاہتے ہیں کہ آپ کو یہ سب مسئلے مسائل نہ ہوں تو آپ کو پندرہ دن میں ایک بار اپنی آنتوں کی صفائی ضرور کرنی چاہیے۔ زیادہ تر بیماریوں کی شروعات پیٹ سے ہی ہوتی ہے پیٹ کے انفیکشن کی بنیادی وجہ ہمارا خراب لائف سٹائل اور خراب کھانا پینا ہوتا ہے ۔جسم میں آ نتیں غذائی نالی کا حصہ ہوتی ہیں جو پیٹ میں پھیلی ہوتی ہیں۔کھانا ہضم ہونے کے ایک گھنٹہ بعد معدے سے ایک چھوٹی آنت کی طرف ایک طاقت ور لہر اٹھتی ہے جس کو فنکشن کھانے کو مکمل ہضم کر نا ہوتا ہے تا کہ معدہ مکمل طور پر خالی ہو جا ئے اور اگلے کھانے کے لیے تیار ہو جا ئے یہ معدے کی صفائی کا قدرتی طریقہ ہے لیکن وقفے وقفے سے کچھ کھاتے رہتے والوں کے جسم میں یہ عمل نہیں ہو پا تا اور ان کے جسم میں ز ہ ر یلے معد ے جمع ہو تے رہتے ہیں۔یہ ز ہ ر یلے معدے ہماری جسمانی صحت کے لیے بہت زیادہ نقصان دہ ہو تے ہیں یہی وجہ ہے کہ ما ہرین صحت یہ مشورہ دیتے ہیں کہ کھانا کھانے کے بعد تقریباً پانچ گھنٹے تک کچھ بھی نہیں کھا نا چاہیے۔تا کہ اس دوران تمام خوراک معدے سے چھوٹی آنت میں منتقل ہو جا ئے آج ہم آپ کو پیٹ اور آنتوں کی صفائی کرنے کے گھریلو نسخوں کے بارے میں بتا ئیں گے رات کو سونے سے پہلے ایک گلاس نیم گرم پانی میں ایک چمچ ترملا پاؤڈر کو ملا کر ایک چمچ شہد اس میں ڈال کر اس کو اچھی طرح ملا لینا ہے اس کے بعد اس کو پی لینا ہے اس کا استعمال رات کو سونے سے پہلے کر نا ہے ایسا کرنے سے پہلے دن سے ہی آپ کو قبض میں آرام دکھنے لگے گا اورآپ کے پیٹ کی تمام پرابلمز ختم ہو جا ئیں گے اس لیے قبض کے مریضوں کو اس کا استعمال ضرور کر نا چاہیے آپ کا پیٹ صبح پانی کی طرح صاف اور ہلکا ہو جا ئے گا ۔اور آپ کی آنتوں میں جمع ساری گندگی بھی صاف ہو جا ئے گی خالی پیٹ تین دانے آملہ کے مر بع کے کھا کر اوپر سے ایک گلاس نیم گرم دودھ پی لیں اس سے بھی قبض کا مسئلہ دور ہو جا ئے گا اور اس کی وجہ سےآپ پیٹ کی کئی بیماریوں سے بھی بچے رہیں گے اور آپ کا پیٹ بھی ٹھیک رہے گا۔ جیسا کہ ہم سب ہی جانتے ہیں کہ پیٹ ہی ہماری صحت کو بگاڑتا ہے اور ٹھیک رکھتا ہے تو ہمیں چاہیے کہ ہم وہ خوراک استعمال کریں کہ جو ہمارے پیٹ کے لیے فائدہ مند ہو۔