پی ایم اے کے صدر ڈاکٹر طارق چدھڑ کے خلاف سازش کی حقیقت سامنے آ گئی

باغی ٹی وی منڈی بہاؤالدین

تصویر کا دوسرا حقیقی پہلو
خصوصی رپورٹ (باغی ٹی وی ) ڈی ایچ کیوہاسپٹل منڈی بہاؤ الدین کے کنسلٹنٹ ماہر نفسیات ڈاکٹر وحید رزاق نے اپنے وڈیو پیغام میں ڈاکٹر انیلہ کی طرف سےصدرپی ایم اے ضلع منڈی بہاؤ الدین ڈاکٹر طارق محمود چدھڑ پر لگائے جانے والے تشدد کے الزامات کی نہ صرف سختی سے تردید کی ہے بلکہ ان کا کہنا ہے کہ ڈاکٹرانیلہ نے ڈاکٹر طارق چدھڑ کو نہ صرف دھکا دیا بلکہ ان کے ساتھ بدتمیزی بھی کی۔ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ وہ اپنے ڈیپارٹمنٹ کے ہیڈ بھی ہیں اور ڈاکٹر انیلہ کا رویہ ہمیشہ سے دوسروں کو بلیک میل کر کے الزامات کی سیاست کے ذریعے اپنے مفادات کا تحفظ رہا ہے ۔ان کی دانست میں سارا ہسپتال انہیں ہراساں کرتا ہے جبکہ یہ کیسے ممکن ہے کہ پورے ہسپتال کا عملہ اسی کام میں لگا ہوا ہے۔ڈاکٹر انیلہ نے ڈاکٹر طارق چدھڑ کی ایک آڈیو کال بھی وائرل کی ہے جس کو ایڈٹ کیا گیا ہے اور بات کو سیاق وسباق سے ہٹ کر بیان کیا گیا ہے۔ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ ڈاکٹر طارق چدھڑ کے آنے سے پہلے ڈاکٹر انیلہ نے ایم ایس سے بدتمیزی کی،ان کے دفتر میں توڑ پھوڑ کی اور انہیں جاب ایگریمنٹ بڑھانے کے حوالے سے پریشرائز کیا ۔ڈاکٹر طارق چدھڑ اس معاملے کو نپٹانے کیلئے آئے تو ڈاکٹرانیلہ آپے سے باہر ہوگئیں اور نہ صرف چدھڑ صاحب کو دھکا دیا بلکہ تشدد اور تھپڑ مارنے کا بیہودہ الزام بھی لگا دیا جس کا حقیقت سے دور دور کا تعلق نہ ہے۔
ضرورت اس امر کی ہے کہ اس سارے واقعہ کی غیر جانبدارانہ انکوائری کروائی جائے اور جو جتنا قصوروار ہےاسے اس کی سزا دی جائے۔
میں اپنے سوشل میڈیا والے بھائیوں سے درخواست کرتا ہوں کہ صرف ایک من گھڑت وڈیو بیان کی وجہ سے کسی عزت دار انسان کو برا بھلا کہنا کہاں کی شرافت ہے.
تھوڑی سی عقل رکھنے والا انسان بھی اگر ڈاکٹر انیلا کا بیان سنے تو اسی وقت سمجھ جائے کہ یہ جھوٹ بول رہی ہے.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.