چلڈرن ہسپتال میں بستروں کی کمی، ڈاکٹر معصوم بچوں کو زمین پر لٹا کر علاج کرنے لگے

جنوبی پنجاب کے سب سے بڑے چلڈرن ہسپتال ملتان میں سہولیات کا فقدان وارڈز میں بستر نہ ہونے کی وجہ سے والدین سخت گرمی میں اپنے بچوں کو زمین پر لٹانے پر مجبور ہو گئے.جنوبی پنجاب کے واحد چلدڑن ہسپتال ملتان میں سہولیات کا فقدان شدت اختیار کر گیا ہے ہسپتال میں ڈاکٹروں کی کمی اور وارڈز میں بسترے موجود نہیں ہیں ۔مریض بچوں کے والدین کے لیے ہسپتال میں بیٹھنے کی جگہ تک موجود نہیں ہے۔ ہسپتال میں مختلف وارڈز میں بسترے نہ ہونے کہ وجہ سے والدین بچوں کو زمین پر لٹانے پر مجبور ہیں۔ مریض بچوں کے والدین کا کہنا ہے کہ حکومت نے وعدہ کیا تھا کہ ہسپتالوں کی حالت ٹھیک کر دیں گے مگرچلڈرن ہسپتال ملتان میں کوئی بھی سہولت موجود نہیں ہے وزیر اعلی پنجاب عثمان بزدار سے اپیل ہے کہ وہ معاملہ کا نوٹس لیں اور چلڈرن اسپتال میں تمام سہولیات مہیا کی جائیں ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.