ورلڈ ہیڈر ایڈ

چودہ اگست کو ہر گھر میں پاکستانی پرچم کے ساتھ ساتھ کشمیر کا پرچم لہرائیں خواجہ آصف

سیالکوٹ (نمائندہ باغی ٹی وی ) مسلم لیگ کے کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے مرکزی راہنما خواجہ محمد آصف نے کہا کہ ایاز صادق آج بھی ہمارے اسپیکر ہیں۔آج کا دن پاکستانی قوم کے لئے سوگوار دن ہے۔ آج کا دن گزشتہ بہتر سالوں کے سیاہ دنوں میں شامل ہو گا۔ بھارت نے اپنے مضموم مقاصد کو عملی جامہ پہنایا ہے۔بھارتی آئین میں جو کشمیریوں کو میسر تھا وہ بھی آج ختم کر دیا گیا ہے۔یہ کشمیریوں ظلم اور بربریت ہے۔سری نگر وادی کے کشمیری اپنے خون سے تاریخ رقم کر رہے ہیں ۔برہان وانی کی شہادت کے بعد آزادی کی آواز کو تقویت ملی۔2016 میں۔ عمران خان نے کہا تھا کشمیر کے دو حصے ہونے چاہئے۔ آج بھارت نے کشمیر کے تین حصے کر دئے ہیں۔کشمیر ہم پر قرض ہے کشمیر آزاد ہو گا۔کشمیر کے سانحہ کے بعد سیاست پر بات نہیں کروں گا۔آج کا دن کشمیریوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کا دن ہے۔چودہ اگست کو ہر گھر میں پاکستانی پرچم کے ساتھ ساتھ کشمیر کا پرچم لہرائیں۔ن لیگ کے مرکزی راہنما احسن اقبال نے کہا کہ آج یہ جنگ نوازشریف کو جیل سے نکالنے کی نہیں ہے۔ اب پاکستانی عوام کی صبر ختم ہو گیا ہے۔پنجاب کے مینڈیٹ کو روندھنا ختم کرو۔پنجاب میں نمبر ون جماعت ن لیگ تھی۔شہباز کی پراڈو لے کر عثمان بزدار کی آلٹو پر پنجاب آ گیا ہے ۔پنجاب کے بلدیاتی نمائندوں کو گاجر مولی کی طرح کاٹ کر پھینک دیا گیا ہے۔پنجاب کی مثالی سڑکیں کا حال پشاور کے گڑھوں کی طرح کر دیا گیا ہے۔پنجاب میں چوری ڈاکے کا راج قائم ہے۔ ہسپتالوں میں مفت دوائیاں موجود نہیں۔ہماری یونیورسٹیاں خسارے میں چلی گئیں ہیں ۔ہم نے خواب دیکھا تھا 2025 میں پاکستان کو پہلی پچیس معاشتوں میں لے کر آنا ہے۔ نیازی کو پاکستان کے دشمنوں نے تخت پر بیٹھایا ہے۔
ورکر کنونشن سے سابق سپیکر ایاز صادق نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ جب خان صاحب مجھے جناب سپیکر کہہ کر بلاتے تھے تو میری ہنسی چھوٹ جاتی تھی کہ میرے تو پیسے پورے ہوگئے۔نواز شریف نے کہا تھا کہ اگر بھارت سے دوستی کرنی ہے تو برابری کی سطح پر کرنی ہے۔ آج کے حکمران ان کی منتیں ترلے کر رہے ہیں
یہ حکمران مریم نواز سے ڈرتے ہیں ہم فوج اور محب وطن جماعتوں سے توقع کرتے ہیں کہ وہ دانشمندی سے کشمیر کے مسئلے کا حل کروائیں۔ عمران خان کو کس نے اجازت دی کہ وہ کشمیر کو تین حصوں میں بٹوارے کی بات کریں ۔ عمران خان بتائیں کہ نواز شریف نے لوٹا کیا تو کہتا ہے کہ یہ نہیں پتہ ۔ سب کو گرفتار کر لیا تو عوام خود مسلم لیگ کا جھنڈا اٹھا لیں گے۔مریم اورنگ زیب نے اپنے خطاب میں کہا کہ نواز شریف کے دور حکومت میں معشیت بھی مضبوط تھی اور دفاع بھی مضبوط تھا۔وزیر اعظم نواز شریف کوٹ لکھ پت جیل میں خون کے آنسو رو رہے ہوں گے.نالائق اور نااہل حکومت کی وجہ سے مہنگائی ایک سال میں دوسرا مہنگا ترین ملک بنا دیا ہے.آج روٹی پندرہ روپے اور نان بیس روپے کر دیا گیا ہے۔ روٹی مہنگی کرنے پر نوٹس لینے والا وزیر اعظم اگلے روز پٹرول مہنگا کر دیتا ہے۔نااہل ، سلیکٹڈ کو باجی علیمہ نظر نہیں آتی ۔پاکستان تحریک انصاف کے اٹھارہ جعلی اکائونٹ نظر نہیں آتے۔انہوں نے کہا کہ مریم نواز کی تصویر ٹی وی آنے ڈرتے ہیں۔آج نوازشریف جیل میں ہے سازش کرنے والا جج گھر بیٹھا ہے۔ورکز کنونشن میں کارکنوں کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔خواجہ محمد آصف نے اسٹیج پر مریم اورنگ زیب کو چادر پہنا کر خوش آمدید کہا

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.