فنکارماہانہ اعزاز یہ بند ہونے سے کسمپرسی کا شکار ہوگئے

ایبٹ آباد سمیت ہزارہ ڈویژن سے تعلق رکھنے والے فنکار اورگلوکارصوبائی حکومت کی جانب سے ماہانہ اعزاز یہ بند ہونے کی وجہ سے کسمپر سی کا شکار ہوگئے ،حکومت سے اعزازیہ بحال کروانے کے مطالبے کے لیے ایبٹ آباد پریس کلب میں فنکار برادری کا اکھٹ ،صوبائی حکومت فنکار برادری پر اپنا دست شفقت قائم رکھے اور سیکرٹری کلچر کی جانب سے اعزازیہ بند کیے جانے کا نوٹس لے سینئر فنکاروں کی ایبٹ آباد پریس کلب میں پریس کانفرنس ،گزشتہ روز ایبٹ آباد پریس کلب میں ہزارہ کے مایہ ناز اورہندکوڈرامے کی پہچان ارشد محمود عباسی ،دیگر سینئر فنکاروں قاضی زبیر ،ذاکر میر مغل ،محمد سعید بھٹی ،محمد جمیل اوربیگم جمیل نے پریس کانفرنس کے دوران صوبائی حکومت سے ماہانہ اعزازیہ بحال کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہاکہ پی ٹی آئی کی حکومت کو اعزاز حاصل ہے کہ قیام پاکستان کے بعدسے پہلی دفعہ اس حکومت نے 2016 میں صوبے کے500فنکاروں کو میرٹ کی بنیاد پر ماہانہ انکے چولہے چلائے رکھنے کے لیے ایک احسن اقدام تھا مگر اب نا معلوم وجوہات کی بناء پر یہ اعزازیہ بند کیا گیا ہے جسے بحال کیا جائے.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.