fbpx

بے بس عوام:بےحس افسران:ACسیالکوٹ اورفردوس عاشق کےدرمیان ہونے والی نوک جھوک:ویڈیووائرل

سیالکوٹ :بے بس عوام:بےحس افسران:اے سی سیالکوٹ اورڈاکٹرفردوس عاشق کےدرمیان ہونے والی نوک جھوک:ویڈیووائرل،اطلاعات کے مطابق معاون خصوصی وزیراعلیٰ پنجاب ڈاکٹرفردوس عاشق اعوان نے آج سیالکوٹ میں ایسی گفتگو کی کہ سننےوالے بھی حیران رہ گئے

ذرائع کےمطابق اس حوالے سے سوشل میڈیا پرایک ویڈیو وائرل ہوئی ہے جس میں ڈاکٹرفردوس عاشق اعوان نے سیالکوٹ رمضان بازارکا دورہ کیا تووہاں دوکانداروں اوردیگراشیافروشوں کی طرف سے منہ مانگے دام لینے اورمرضی کی قیمتیں طئے کرنے پرنوٹس لیا

اس دوران جب ڈاکٹرفردوس عاشق اعوان نے سرکاری نرخوں کی فہرستیں دیکھیں تومعلوم ہوا کہ بے بس لوگ ان دوکانداروں کے ہاتھوں یرغمال بنے ہوئے ہیں اوران کوکوئی پوچھنے والا نہیں

 

اس دوران اے سی سیالکوٹ کو بھی خبرملتی ہے کہ ڈاکٹرفردوس عاشق اعوان بازاروں میں قیمتوں کا جائزہ لے رہی ہیں تو وہ بھی وہاں پہنچ جاتی ہیں

اے سی سیالکوٹ سے ڈاکٹرفردوس عاشق اعوان سوال کرتی ہیں کہ محترمہ بے بے لوگ ان دوکانداروں کے ہاتھوں لٹ رہے ہیں اوروہ اپنی مرضی کی قیمتیں لے رہے ہیں تواے سیالکوٹ کوئی جواب نہ ددے سکیں

اس پرڈاکٹرفردوس عاشق اعوان نے اے سی سیالکوٹ سے کہا کہ اللہ کی بندی اگرآپ ٹھنڈے کمروں‌ میں ہی بیٹھی رہیں توپھرعوام کی داد رسی کون کرے گا

آپ کوتوچاہیے تھا کہ عوام کی فلاح وبہبود کے لیے اپنے دفترسے نکل کرعوام میں جاکران کے مسائل حل کرتیں‌

ڈاکٹرفردوس عاشق اعوان نے کہا کہ آپ توتھکی ہوئی ہیں اورآپ کہ یہ پتہ بھی نہیں کہ آپ اسی عوام کے خون پسینے کی کمائی سے بھاری تنخواہیں اورمراعات لیتی ہیں اورپھرآپ کام بھی نہیں کرتیں‌،

کچھ توخوف خدا ہونا چاہیے ، اے سی سیالکوٹ کے اندراس قدرتکبراورانا دیکھنے میں نظرآئی کہ وہ بجائے اپنی غلطی تسلیم کرتیں اورعوام کے مسائل جاننے کی کوشش کرتیں ، عوام اورحکومت کومنہ چڑاتے ہوئے وہاں سے چل دیں اورلوگ دیکھتے رہ گئے

 

 

دوسری طرف پاکستان میں تبدیلی کی مخالف اورپاکستان کی اپوزیشن جماعت ن لیگ نے اس موقع پرعوام کے ساتھ ، نظآم کے ساتھ اورکام سے ساتھ کھڑا ہونے کی بجائے اس موقع پربھی شرارت اورشرپسندی سے کام لیتے ہوئے بجائے سراہنے کے اکسانے کا فریضہ سرانجام دے کراپنی اصلیت سب کے سامنے پیش کردی ہے جیسے مائزہ حمید گجراپنے رویے سے ثابت کرررہی ہیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.