ٹھٹھہ : باغی ٹی وی کی خبرپرایکشن،ایس ایچ او کیخلاف ڈی ایس پی کی سربراہی میں انکوائری ٹیم تشکیل

ٹھٹھہ ،باغی ٹی وی( نامہ نگار راجہ قریشی )باغی ٹی وی کی خبرپرایس ایس پی ٹھٹھہ عدیل حسین چانڈیوکا فوری ایکشن،ایس ایچ او کیخلاف ڈی ایس پی جمعہ خان کی سربراہی میں انکوائری ٹیم تشکیل دے دی گئی ہے،
تفصیل کے مطابق گذشتہ روزباغی ٹی وی نے ایک خبرچلائی تھی جس میں ایک خاتون رضیہ بی بی نے عوامی پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہاتھاکہ گذشتہ دو رات قبل ایس ایچ او ٹھٹھہ اللہ ڈنو پنھور پولیس نفری کے ہمراہ ہمارے گھر پر چڑھائی کر کے بلا جواز اس کے شوہر مجید پلیجو کو پکڑ کر غائب کردیا،متاثرہ عورت رضیہ نے بتایاکہ وہ گذشتہ چار د ن پہلے مسن محلہ میں کرائے کے گھر میں شفٹ ہوئی ہیں ، اس نے مزید کہا کے میرے شوہر کا کسی برائی کے ساتھ کوئی تعلق نہ ہونے کی باوجود پولیس نے میرے شوہر کو پکڑ کر غائب کردیا ہے، پولیس مجھے پریشان کر رہی ہے متاثرہ عورت نے کہا میں اپنے شوہر سے ملاقات کے لئے جب ٹھٹھہ تھانہ پہنچی جہاں پر ایس ایچ او ٹھٹھہ نے اسے دو آفردی ایک اکیلے میں ملاقات، دوسری 20000 ہزار کیش کی ڈیمانڈ کی، اس نے مزید کہا ایس ایچ او ٹھٹھہ نے ٹیبل سے نیچے میرے پیروں پر اپنے پائوں رکھے اور اسے اکیلے میں ملنے پر مزید دبا ئوڈالا اس نے کہا ایس ایچ او اللہ ڈنو پھنور کو عورتوں کا بھی احترام نہیں ہے اکیلے میں ملنے والی آفر کو ٹھکرانے کے بعد ایس ایچ او نے تھانے کے لاک اپ میں بنداس کے شوہر سے ملاقات بھی نہیں کرنے دی، متاثرہ عورت نے ایس ایس پی ٹھٹھہ ڈی آئی جی حیدرآباد اور آئی جی سندھ سمیت ارباب اختیار سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیاتھا۔
باغی ٹی وی پرخبرچلنے کے فوراََ بعد ایس ایس پی ٹھٹھہ نے ایس ایس ایچ کے خلاف ایکشن لیتے ہوئے فوری انکوائری کاحکم جاری کردیا
اورڈی ایس پی جمعہ خان کی سربراہی میں انکواری ٹیم تشکیل دے دی،ٹھٹھہ کے شہریوں کاکہنا ہے کہ ڈی ایس پی جمعہ خان ایک ایماندار اور میرٹ پر فیصلے کرنے والا آفیسرہے لیکن دوسری شہریوں نے یہ خدشہ بھی ظاہر کیا کہ ایس ایس او تھانہ ٹھٹھہ اللہ ڈنو پھنورایک بااثر آدمی ہے ،اس کی پشت پر سیاسی وڈیرے ہروقت موجود رہتے ہیں،سوال پیداہوتا ہے کہ ایک ایماندار ڈی ایس پی سیاسی دبائو برداشت کرسکیں گے ،کیا ایس ایس ایچ پر لگنے والے الزامات کی شفاف انکوائری کرسکیں گے ؟دوسری طرف متاثرہ خاتون نے کہا ہے کہ میں ایس ایس پی اور ڈی ایس پی ٹھٹھہ سے امید رکھتی ہوں کے مجھے ضرور انصاف دلائیں گے ۔

Leave a reply