عائشہ ملک نے پریانکاچوپڑا کو کھری کھری سنادیں‌

نیویارک : عائشہ ملک نے ایک بار پھر بھارتی انتہا پسند ادکارہ کو کھری کھری سنا دیں‌،پاکستانی نژاد امریکی بلاگرعائشہ ملک نے ایک بار پھر بھارتی اداکارہ اور اقوام متحدہ میں خیر سگالی کی سفیر پریانکا چوپڑا کوتنقید کا نشانہ بنادیا۔

ذرائع کے مطابق پاکستانی نژاد عائشہ ملک نےاپنے ٹویٹر ہینڈل پر پریانکا چوپڑا کی تقریب سے خطاب کی ایک ویڈیو شیئر کی جس میں انہوں نے خواتین کو بااختیار بنانے اور لڑکیوں کو تعلیم دینے کی اہمیت پر بیان دیا۔

عائشہ ملک نے ٹویٹ میں اپنے ردعمل میں لکھا کہ ’میں آپ سے مکمل اتفاق کرتی ہوں۔اب ان کو مائیک چھینے بغیر اپنی بات کہنے کا موقع دیا جائے۔‘
عائشہ ملک نے خواتین کے حقوق سے متعلق پریانکاچوپڑا کے بیان پر اپنا ٹویٹ گذشتہ ماہ امریکی شہر لاس اینجلس میں ہونے والے ایک ایونٹ کے رد عمل میں دیا ۔

ذرائع کے مطابق جب عائشہ ملک نے اداکارہ سے سوال کیا کہ انہوں نے رواں برس فروری میں ٹویٹ کے ذریعے بھارتی فوج کی حمایت کی اور مبینہ طور پر وہ دونوں ممالک میں نیوکلیئر جنگ کی خواہاں ہیں؟

پاکستانی نژاد خاتون نے اپنا سوال جاری رکھتے ہوئے اداکارہ کو کہا کہ وہ اقوام متحدہ کے ذیلی ادارے ’یونیسیف‘ کی سفیر برائے خیر سگالی ہیں، انہیں جنگ کی باتیں شبہ نہیں دیتیں اور پھر پاکستان میں ان کے لاکھوں مداح ہیں، جو ان کی دونوں ممالک میں جنگ کی خواہش کی بات سے ناراض ہوئے ہیں۔

ٹویٹر پر وائرل ہونے والی اس ویڈیو میں دیکھا جا سکتا ہے کہ عائشہ ملک کا سوال ختم ہی نہیں ہوا تھا کہ تقریب کے منتظمین میں شامل ایک اہلکار ان سے مائیک چھین لیتے ہیں اور اسی دوان پریانکا چوپڑا پاکستانی نژاد خاتون کو جھاڑ پلا دیتی ہیں۔

یاد رہے کہ فروری میں انڈیا اور پاکستان جنگ کے دہانے پر پہنچ چکے تھے تو پریانکا چوپڑاایک ٹویٹ پر کشیدگی کے اس ماحول میں انڈین فوج کی حمایت کرتی دکھائی دیں تھیں۔انڈین آرمڈ فورسز کا ہیش ٹیگ استعمال کرتے ہوئے انھوں نے ٹویٹ کیا تھا ‘جے ہنذ’۔ اس پر انھیں دنیا بھر سے تنقید کا سامنا کرنا پڑا تھا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.