fbpx

سفارتخانے پر حملہ،قانونی کاروائی کی جائے گی،افغان وزیر خارجہ کی بلاول کو یقین دہانی

کابل:افغان وزیر خارجہ مولوی امیرخان متقی کی پاکستانی ہم منصب بلاول بھٹو زرداری سے ٹیلی فونک گفتگو ہوئی ہے

افغان وزیر خارجہ مولوی امیرخان متقی نے افغان سفیر پر حملے کی مذمت کی اور اطمینان دلایا کہ پاکستانی سفارت خانے اور عملے کی حفاظت پر خصوصی توجہ دی جائے گی۔ واقعہ میں ملوث لوگوں کو گرفتار کرکے قانونی کارروائی کی جائے گی۔ پاکستان کے وزیر خارجہ بلاول زرداری کا کہنا تھا کہ اس طرح کے واقعات دونوں ممالک کے درمیان تعلقات کو متاثر نہیں کرسکتے اور کسی کو بھی اپنے مذموم مقاصد کی تکمیل کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

دوسری جانب اقوام متحدہ نے کابل میں پاکستانی سفارتخانے پر حملے اور ناظم الامور کو نشانہ بنانے کے حملے کی مذمت کی ہے اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل کے ترجمان اسٹیفن ڈوجارک نے کابل میں پاکستانی سفارتخانے پر حملے کی مذمت کی ہے انہوں نے افغانستان میں سکیورٹی کی صورتحال بہتر ہونے کی امید ظاہر کی اور کہا کہ یہ بات حوصلہ افزا ہے کہ پاکستانی ناظم الامور عبیدالرحمان نظامانی خیریت سے ہیں امید ہے کہ شدید زخمی سکیورٹی گارڈ جلد ٹھیک ہوجائے گا چاہتے ہیں افغانستان میں حالات بہتر ہوں اورامن قائم ہو

علاوہ ازیں ایرانی وزارت خارجہ کے ترجمان نے کابل میں واقع پاکستانی سفارتخانے پر حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کی۔ناصر کنعانی نے افغان بے گناہ عوام کے خلاف دہشتگردانہ حملے کے تسلسل پر اپنی تشویش کا اظہار کیا اور کہا کہ ایسے مسلسل دہشتگردانہ حملوں کا نتیجہ افغانستان میں بدامنی اور عدم استحکام ہے جو اس ملک کے عوام اور خطے کے مفادات کے منافی ہے ،پاکستان میں اسلامی جمہوریہ ایران کے سفیر سید محمد علی حسینی نے بھی کابل میں پاکستانی سفارتخانے پر ہونے والے حملے کی سخت مذمت کرتے ہوئے افسوس کا اظہار کیا ہے۔

قبل ازیں سینیٹ میں چیف وہپ سینیٹر سلیم مانڈوی والا نے کابل میں پاکستانی سفارتخانے پر حملے کی مذمت کی ہے اور کہا ہے کہ کابل میں پاکستانی سفارتخانے پر حملہ قابل مذمت ہے، کابل میں ہیڈ آف مشن پر بزدلانہ حملے کی شدید مذمت کرتے ہیں،حملے کے دوران سکیورٹی گارڈ کی بہادری پر انہیں سلام پیش کرتے ہیں،حملے کے نتیجے میں زخمی ہونیوالے سکیورٹی گارڈ کی جلد صحتیابی کے لئے دعاگو ہیں، افغان حکومت سفارتخانے پر حملے کی فوری تحقیقات کرے، افغان حکومت بزدلانہ حملے میں ملوث عناصروں کا تعین کرکے قانون کے کٹہرے میں لائے،

کابل میں پاکستانی سفارتخانے پرحملے کیخلاف مذمتی قرارداد پنجاب اسمبلی میں جمع
علاوہ ازیں افغانستان میں پاکستانی ناظم الامور عبید الرحمٰن نظامانی پر حملے کیخلاف مذمتی قرارداد پنجاب اسمبلی میں جمع کروا دی گئی،قرارداد مسلم لیگ (ن) کی رکن حناپرویز بٹ کی جانب سے جمع کرائی گئی، قرارداد کے متن میں کہا گیا کہ یہ ایوان افغانستان کے دارالحکومت کابل میں پاکستانی کے سفارت خانے پر حملے کی شدید مذمت کرتا ہے حملے میں پاکستانی ناظم الامور عبید الرحمٰن نظامانی کو نشانہ بنانے کی کوشش کی گئی دہشتگردی کے حملے میں سفارتخانے کا سیکیورٹی گارڈ بھی زخمی ہوا ہے افغانستان میں عبوری حکومت فوری طور پر حملے کی جامع تحقیقات کرکے مجرموں کو گرفتار کر کے خلاف کارروائی کرے افغانستان میں پاکستانی سفارتی عملے کی حفاظت اور سلامتی کو یقینی بنانے کے لیے فوری اقدامات کیے جائیں

کابل میں پاکستانی سفارتخانے پر فائرنگ کی گئی ہے