fbpx

امریکہ کی جانب سے پاکستان کو ڈیزاسٹر پیکج دیاجانا چاہیے،چئیرمین امریکی خارجہ امور کمیٹی

آئی ایم ایف سے بھی پاکستان کو مزید ریلیف ملنا چاہیے

امریکی خارجہ امور کمیٹی کے چئیرمین سینیٹر باب میننڈیز نے کہا کہ امریکہ کی جانب سے پاکستان کو ڈیزاسٹر پیکج دیاجانا چاہیے۔

باغی ٹی وی : سینیٹر باب میننڈیز نے نیو جرسی میں خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان میں سیلاب سے بڑے پیمانے پر جانی و مالی نقصان ہوا، 3 کروڑ لوگ گھروں سے محروم ہوئے۔

پاکستانی عوام اس وقت تباہی سے دوچار ہیں ،ایسی تباہی آپ نے پہلے کبھی نہیں دیکھی ہو…

امریکی سینیٹر باب میننڈیز نے مطالبہ کیا ہے کہ سیلاب سے متاثرہ پاکستان کو امداددینے کے لیے انٹر نیشنل ڈونرز کانفرنس کا انعقاد کیا جانا چاہیے پاکستان کو دی جانے والی امداد قطرے سے زیادہ نہیں امریکی حکومت سے درخواست کی ہے کہ امدادی رقم کے 20 ملین ڈالر جاری کریں۔

سینیٹر باب میننڈیز نے کہا کہ امریکہ کی جانب سے پاکستان کو ڈیزاسٹر پیکج دیاجانا چاہیے،آئی ایم ایف سے بھی پاکستان کو مزید ریلیف ملنا چاہیے۔

واضح رہے کہ قبل ازیں امریکی رکن کانگریس شیلا جیکسن نے ایوان نمائندگان میں پاکستان کے سیلاب متاثرین کے لئے مدد کی اپیل کی تھی امریکی کانگریس میں پاکستان میں سیلاب سے متعلق بریفنگ میں کہا گیا تھا کہ پاکستانی عوام اس وقت تباہی سے دوچار ہیں ، ایسی تباہی آپ نے پہلے کبھی نہیں دیکھی ہو گی۔

پاکستان میں بیماریوں اور اموات کی صورت دوسری آفت کا خطرہ ہے،اقوام متحدہ

پاکستان کا حال ہی میں دورہ کرنے والی امریکی رکن کانگریس شیلا جیکسن نے امریکی ایوان نمائندگان میں پاکستان کے سیلاب سے متاثر علاقوں کی تصاویر دکھاتے ہوئے کہا تھا کہ پاکستانی عوام اس وقت تباہی سے دوچار ہیں ، ایسی تباہی آپ نے پہلے کبھی نہیں دیکھی ہو گی ایسی بارش ہوئی جس سے ہر طرف سیلاب ہے-

انہوں نے کہا تھا کہ فضائی سروے میں پاکستان کےسیلاب سےمتاثرعلاقوں کےدورے میں تاحد نظرپانی دیکھا سیلابی پانی نے پل اورسڑکیں تباہ کردی ہیں۔ لوگ ان علاقوں میں محصورہو کر رہ گئے ہیں۔ جہاں لوگوں نے پناہ لی چاہے وہ پل ہو سڑک یا کوئی اورجگہ سب پانی بہا لے گیا۔

شیلا جیکسن نے کہا تھا کہ امریکا سب سے پہلے پاکستان کی مدد کو پہنچا امید ہے یہ سلسلہ جاری رہے گا۔

سیلاب متاثرہ علاقوں میں پاک فضائیہ کی جانب سے20 ٹینٹ سینٹر، 54 ریلیف کیمپس قائم