fbpx

بھارت: دو سال سے امریکی سفیر کی غیر موجودگی

بھارت اس وقت دنیا کا واحد ملک ہے جہاں دو سال کے طویل عرصہ سے امریکی سفیر تعینات نہیں کیا گیا اور یہ اس وقت تک دنیا کے کسی بھی ملک میں امریکی سفیر نہ ہونے کا طویل ترین عرصہ ہے۔

بھارتی دفتر خارجہ کےایک انتہائی سینیئر آفیسر نے اس حوالے سے نئی دہلی سے فون پر بات کرتے ہوئےبتایا کہ امریکی صدر جوبائیڈن نے جنوری 2021 میں امریکہ کا صدارتی منصب سنبھالنے کے بعد ایرک گارسیٹی کو بھارت میں سفیر نامزد کیا تھا جب کہ اس وقت بھارت میں امریکہ سفیر کینتھ جسٹر اپنی مدت  پوری ہونے پر بھارت سے واپس چلے گئے تھے۔ لیکن دو سال گزرنے کے باوجودایرک گارسیٹی کو  ابھی تک سفارتی ذمہ داریاں سنبھالنے کے لئے نئی دہلی نہیں بھیجا گیا جب کہ امریکی ناظم الامور ہی نئی دہلی میں امریکہ کی نمائندگی کررہے ہیں۔

بھارتی دفتر خارجہ کے آفیسر نے بتایا کہ بھارت میں مستقل امریکی سفیر نہ ہونے سے بھارت اور امریکہ کے تعلقات میں بہتری کی رفتار خاصی سست رہی ہے۔ انہوں نے مزیدبتایا کہ صدر بائیڈن کی خواہش ہے کہ نئی دہلی میں لاس اینجلس کے سابق میئر ایرک گارسیٹی اپنی ذمہ داریاں سنبھالیں۔

انہوں نے صدارتی انتخابات میں کامیابی کے بعد دسمبر میں اس بات کی یقین دہانی بھی کرائی تھی کہ انہیں بھارت بھیجا جائےگالیکن ایرک پر امریکی سینیٹ کی طرف سے الزام لگایا جارہا ہے کہ انہوں نے سب کچھ جانتے ہوئے بھی اپنے ایک سابق معاون کے خلاف کارروائی نہیں کی جن پر جنسی ہراسانی اورغنڈہ گردی کے الزامات تھےحالانکہ ایرک اس بات کی تردید بھی کرچکے ہیں۔

اس کے علاوہ سینیٹ میں ڈیمو کریٹس کی معمولی اکثریت بھی ان کی نئی دہلی میں تعیناتی آڑے آرہی ہے۔   لیکن اب ایسا لگ رہا ہے کہ 2024 میں صدر بائیڈن کی صدارتی ٹرم ختم ہونے تک بھارت میں ان کی تقرری ممکن نہیں۔ بھارتی دفتر خارجہ کے آفیسر نے مزید بتایا کہ بھارت میں پانچویں مرتبہ عارضی طور پر ناظم الامور کی تقرری کئے جانے کی توقع ہے۔

یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ اس وقت دنیا کے 20 ممالک میں امریکی سفیر نامزد کئے جانے کے باوجود اپنی تعیناتی کے منتظر ہیں۔ ان ممالک میں بھارت سمیت آذربائیجان، دی بہاماز، بارباڈوس، کمبوڈیا، ایکواڈور، گیانا، کویت، مالدیپ، نائیجر، نائیجیریا، پاپا نیوگنی، روانڈا، سعودی عرب، ترکمانستان، متحدہ عرب امارات اور دیگر دو ممالک شامل ہیں۔

صدر بائیڈن کےحکومت قائم ہونے بعد پاکستان میں گزشتہ سال اپریل، سری لنکا میں فروری، نیپال میں اکتوبر اور بنگلا دیش میں دسمبر میں امریکی سفیروں نے اپنی ذمہ داریاں سنبھال لی ہیں۔ اس کے علاوہ 15 ممالک میں ابھی تک امریکہ سفیروں کو نامزد ہی نہیں کیا گیا۔ اس طرح دنیا کے 35 ممالک امریکی سفیروں کی پوسٹیں خالی ہیں۔