fbpx

ای چالان کیلیے نصب کیمرے نکارہ ہونے سے پنجاب حکومت کو سالانہ 1 ارب کا نقصان

لاہور: پنجاب کے دارالحکومت میں ای چالان کیلئے نصب کیمرے آپریشنل نہ ہونے کے باعث شہر میں روزانہ ای چالان کی تعداد 12 ہزار سے کم ہوکر 2 ہزار تک رہ گئی، جس سے صوبائی حکومت کو کروڑوں روپے کا نقصان ہونے لگا۔ذرائع کے مطابق پنجاب کے دارالحکومت لاہور میں ای چالاننگ کےلیے نصب کیمرے آپریشنل نہ ہونے سے خزانہ کو بڑا نقصان ہونے لگا، شہر میں روزانہ ای چالاننگ کی تعداد 12 ہزار سے کم ہوکر 2 ہزار تک رہ گئی۔

رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ای چالاننگ کے کیمرے نان آپریشنل ہونے کی وجہ سے سالانہ 1 ارب کا نقصان ہوا۔ذرائع کا کہنا ہے کہ سیف سٹیز اتھارٹی کی جانب سے حکومت کو بار بار آگاہ کیا گیا لیکن حکومت کی جانب سے غیر ملکی کمپنی کے ساتھ معاملات میں تاخیر کی وجہ سے نقصان 1 ارب تک پہنچ گیا۔

90فیصد سےزائد ریونیودینےوالےشہرقائد کوحکمرانوں نےتباہ کرکےرکھ دیا ہے:حافظ نعیم…

حکام کی جانب سے جاری اعداد و شمار کے مطابق ای چالاننگ کے آغاز سے اب تک 2 ارب 90 کروڑ سے زائد کے 80 لاکھ سے زائد ای چالان کئے گئے، لیکن کیمروں میں خرابی کے باعث ای چالاننگ میں کمی کا سامنا ہے۔ذرائع کا مزید کہنا تھا کہ غیر ملکی کمپنی کے ساتھ آپریںشنز اینڈ مینٹینینس کے معاملات حتمی مراحل میں ہیں۔

لاہور:کورونا ویکسینیشن سنٹرزکےقیام میں کروڑوں روپےکی مالی بےضابطگیاں

یاد رہے کہ لاہور کی طرح اسلام آباد میں بھی کئی مقامات پر کیمروں کے خراب ہونے کی اطلاعات ہیں جسکی وجہ سے جرائم پیشہ افراد پر نطررکھنا مشکل ہوجاتا ہے ، ملک بھر میں سیکورٹی کی صورت حال کو بہتر کرنے کے لیے جدید کیمروں کی انسٹالینشن بہت ضروری قرار دی گئی ہے