کیا ہم گانے گا کر یا ایک منٹ کی خاموشی اختیار کر کے کشمیر کو بھارت کے ظلم سے آزاد کر پائیں گے؟ انصار عباسی

اسلام آباد:کیا ہم گانے گا کر یا ایک منٹ کی خاموشی اختیار کر کے کشمیر کو بھارت کے ظلم سے آزاد کر پائیں گے؟ اطلاعات کے مطابق معروف صحافی اورکالم نگارانصارعباسی نے کشمیریوں کی تحریک آزادی کے حوالے سے ایک تجزیہ کیا ہے جس میں انہوں‌نے فوج پرسخت تنقید کی ہے

باغی ٹی وی کےمطابق انصارعباسی نے پاک فوج کی طرف سے کشمیریوں کی حمایت اوربھارتی مظالم کے خلاف جوترانہ پیش کیا ہےاس کو ناپسند کیا ہے، وہ کہتے ہیں کہ جو کشمیریوں‌کی حمایت یہ ترانے اورگانے پیش کررہے ہیں یہ کشمیر کے لیے کچھ نہیں کررہے

ذرائع کےمطابق انصارعباسی نے پاک فوج کی طرف سے آج پیش کیئے جانے والے ترانے پرسخت تنقید کرتے کہا ہے کہ ” سوال یہ ہے کہ کیا ہم گانے گا گا کر یا ایک منٹ کی خاموشی اختیار کر کے کشمیر کو بھارت کے ظلم سے آزاد کر پائیں گے”؟؟

دوسری طرف سوشل میڈیا پراس تنقید کےجواب میں کشمیری نوجوانوں کی طرف سے سخت ردعمل آرہا ہے اکثرکا کہنا ہے کہ ہم چونکہ حالات کوقریب سے دیکھ رہے ہیں اوراسلام آباد یا لاہورمیں بیٹھے ہوئے کسی صحافی سے زیادہ جانتے ہیں ہمیں پتہ ہے کہ اس وقت کشمیرکا مسئلہ کیا حیثیت اختیارکرگیا ہے

ایک کشمیری کا کہنا ہےکہ بھارت اورکشمیر کے معاملے میں بھارت کی مدد کرنے والی عالمی قوتوں کو زیادہ پتا ہے کہ کشمیرمیں تحریک آزادی اس وقت کس پوزیشن ہے یہی وجہ ہےکہ بھارت اورحمایتی چیخ چیخ کرکہہ رہے ہیں کہ کشمیربھارت کےہاتھ سے نکل رہے ہے اورکشمیری پہلے سے زیادہ سرگرم ہیں مگرانصارعباسی ایک ٹویٹ کرکے ایسے منظرپیش کرتے ہیں جیسے کہ وہ کشمیرکے چپے چپے پرپھررہےہیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.