fbpx

اے آروائی مالکان عمران کو پاکستان پرمسلط کرنیکی سازش کے سپانسرزہیں،خواجہ سعد رفیق

اے آروائی مالکان عمران کو پاکستان پرمسلط کرنیکی سازش کے سپانسرزہیں،خواجہ سعد رفیق

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق نجی ٹی وی چینل اے آر وائی نے گزشتہ روز قومی سلامتی کمیٹی اجلاس کے حوالہ سے ذرائع سے خبر چلائی جس پر پیمرا نے اے آر وائی کو نوٹس جاری کیا ہے تو وفاقی وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب نے بھی اس خبر کو جھوٹا قرار دیا ہے

اب ن لیگی رہنما ، وفاقی وزیر ریلوے خواجہ سعد رفیق نے بھی سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کی ہے جس میں انہوں نے کہا ہے کہ گولڈ فنگر فیم اے آر وائی مالکان عمران کو پاکستان پرمسلط کرنیکی سازش کے سپانسرزہیں سچ اوراے آروائی ایک دوسرے کی ضد ھیں رینکنگ کیلئے سنسنی پھیلانا،خواھش یاافواہ کوخبر بنانا،نفرت جھوٹ اورتعصب کا پرچاراس چینل کے مالکان کی پالیسی ھے چھان بین کرنا ھوگی کہ یہ مافیایہاں کس کےمفادات کیلئے کام کررھا ھے؟

دوسری جانب سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر بھی #اے_آر_وائی_کوبندکرو ٹاپ ٹرینڈ بن چکا ہے ، ٹرینڈ میں صارفین اے آروائی کے حوالہ سے اپنے جذبات کا اظہار کر رہے ہیں

ڈاکتر ہما سیف لکھتی ہیں کہ اے آر وائی کے جھوٹ اور پروپیگنڈا کی وجہ سے کیس ہارنے اور جرمانہ دینے کی لمبی تاریخ ہے اب پھر پاکستانی سفارتکار سے غلط باتین منسوب کرکے خان کے حق مین اور ملک کے خلاف پروپیگنڈا کررہے اے آر وائی کو 2018 مین بھی جھوٹ اور پروپیگنڈا کی وجہ سے تین ملئن کا جرمانہ ہوا ،اس سال بھی ARY کو جھوٹے پروپیگنڈا کی وجہ سے ناصرف جرمانہ ہوا بلکہ معافی بھی مانگنی پڑی

اے آر وائی پر خبر چلنے کے بعد وفاقی وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب کا کہنا تھا کہ نجی ٹی وی پرحساس معاملات پر گفتگو اورحقائق کوغلط اندازسےپیش کرنا خطرناک ہے نیشنل سکیورٹی کونسل کے بیان کے بعد سازش کی بحث دفن ہوگئی ہے واضح ہوگیا کہ کوئی سازش نہیں ہوئی، اسے سازش دکھانے والے اصل میں سازش کررہے ہیں پاکستانی سفیر نے موقف اجلاس میں رکھا، ان کے مراسلے کے تناظر اور مواد کا بغور جائزہ لیا گیا ،سفیر کے موقف، تناظر اور ارادے کے واضح ہونے کے بعد یہ خبریں محض منفی سیاست کا حصہ ہیں ،جھوٹ کو خبر بنا کر پیش کرنا پاکستان کے قومی مفادات کے گلے پر چھری چلانا ہے عمران صاحب بعض چینلز کو جھوٹی خبریں فیڈ کررہے ہیں جو ملک کے خلاف سازش ہے ،عمران صاحب کا جھوٹ پکڑا گیا ہے تو وہ میڈیا کے ایک حصے کو جھوٹی خبریں پھیلانے کے لئے استعمال کررہے ہیں ،نیشنل سکیورٹی کونسل کے اعلامیے کے بعد اس نوع کی خبریں ملک کے ساتھ بھلائی نہیں،ملکی سلامتی افراد ، اداروں سے زیادہ مقدم ہوتی ہے۔

وزیراعظم کو دھمکی آمیز خط کس نے بھیجا؟ بحث جاری

دھمکی آمیز خط کونسی شخصیت کو دکھانا چاہتے ہیں؟ حکومت کا بڑا اعلان

وزیراعظم کو دھمکی آمیز خط کا معاملہ سپریم کورٹ پہنچ گیا

دھمکی آمیز خط ،وزیراعظم نے سینئر صحافیوں کو دکھانے کا اعلان کر دیا

دھمکی آمیز خط کے بارے تہلکہ خیز انکشافات سامنے آ گئے

قوم سے خطاب مؤخر،خط کس نے لکھا ؟کتنی سخت زبان،کیا پیغام،عمران خان نے سب بتا دیا

پیکنگ ہو گئی ،عمران خان کابینہ کے وزرا بیرون ملک بھاگنے کو تیار

امریکی اہلکار کی ذاتی رائے کو سازش نہیں کہا جا سکتا، اسد مجید