fbpx

اسٹیبلشمنٹ سے اپیل کرتا ہوں جلد از جلد الیکشن کروائیں ،شیخ رشید

راولپنڈی: سابق وزیر داخلہ شیخ رشید کا کہنا ہے کہ میرے شہر کی فضا بڑی خوفناک ہے اس ملک میں مداخلت کو فوج کے خلاف کیا جا رہا ہے، پاک فوج کے خلاف منظم مہم چلائی جا رہی ہے-

باغی ٹی وی : لال حویلی میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے شیخ رشید کا کہنا تھا کہ مسجد نبوی میں نعرے نہیں لگے لوگ ہوٹلوں سے نکلے تھے، صرف 2 ووٹوں کا فرق ہے 20 کروڑ ریٹ تھا ہم 25 کروڑ لگائیں تو کل یہ حکومت گر جائے گی، عمران خان کی کال پر فیصلہ مئی کے مہینے میں ہوجائے گا، یہ بھی ہوسکتا ہے ہم بھی نہ رہیں وہ بھی نہ رہیں جھاڑو ہی پھر جائے۔

اداروں سے جنگ ہوئی تو عمران خان کے ساتھ چٹان کی طرح کھڑا رہوں گا،شیخ رشید

شیخ رشید نے کہا میرے شہر کی فضا بڑی خوفناک ہے اس ملک میں مداخلت کو فوج کے خلاف کیا جا رہا ہے، پاک فوج کے خلاف منظم مہم چلائی جا رہی ہے، بھٹو کے دور میں لوگوں نے اپنے آپ کو آگ لگا دی تھی عمران خان کی کال پر ایسا ہو سکتا ہے، مطالبہ صرف الیکشن ہے اور میں اداروں اور مقتدر طاقتوں اور اسٹیبلشمنٹ سے اپیل کرتا ہوں جلد از جلد الیکشن کروائیں اگر یہ ماحول رہا تو حالات عمران خان کے ہاتھ سے نکل جائیں گے 31مئی سے پہلے الیکشن کی تاریخ دی جائے میں عمران کو منالوں گا، اگر عمران خان کہے تو اسٹیبلشمنٹ سے بات کرنے کو تیار ہوں۔

سابق وزیر داخلہ کا کہنا تھا کہ جیلیں ہمیں ڈرا نہیں سکتیں، ہتھکڑی ہمارا زیور ہے، رات 12 بجے تک عمران خان میٹنگ کرتا ہے، عمران خان کے پاس آئیڈیا ہے میڈیا کے ساتھ شئیر نہیں کرسکتے موجودہ حالات میں کوئی سازش نہیں ہونی چاہیے، فئیر الیکشن ہونے چاہیے عمران خان نے منع کیا ہے کہ مقتدر حلقوں اور اسٹیبلشمنٹ سے بات نہیں کرنی آج سے 21 دن پہلے ہمارے حالات دن اتنے اچھے نہیں تھے، اب لوگ سب جان چکے ہیں، جن پرفرد جرم لگنی تھی ان کو وزیراعظم اور وزیراعلی بنادیا گیا۔

انہوں نے کہا ایک سازش ہو رہی ہے 30 دن بڑے اہم ہیں حالات کو کنٹرول کر لیا جائے، میں حالات کو سمجھتا ہوں اور ٹھنڈا رکھنا چاہتا ہوں۔ ان کا کہنا تھا کہ میری سولویں وزارت ہے اور کتاب میں لکھا ہے میری عظیم فوج کا وقار بلند رہے، جمہوریت برقرار رہےعمران خان کے ساتھ کھڑا ہوں، جتنے شہروں میں مقدمہ درج کیا گیا ہے ایک ہی جیسے دفعات ہیں-

میں عمران خان کے ساتھ مشکل وقت میں پوری وفاداری نبھاؤں گا،شہباز گل

سابق وزیر داخلہ نے کہا میرے خلاف لاتعداد شہروں میں مقدمات درج کرائے ہیں، فیصل آباد والا مدعی رانا ثناء اللہ کا خاص بندہ ہے، میں اجرتی قاتل سے نہیں ڈرتا مجھے بتائیں کس تھانہ میں گرفتاری ڈالوں۔ پہلے دن 3 سو افراد کا نام ای سی ایل سے نکالا گیا جن پر منشیات کے مقدمات تھے، ثابت ہو گیا ان لوگوں سے عوام نفرت کرتی ہے، مسجد نبوی کا وقوعہ مسجد کی حدود سے باہر ہوا ہے، فرد جرم والے بوٹ پالش کرکے آگئے۔

شیخ رشید نے کہا کہ لانگ مارچ خونی ہو سکتا ہے ملک کے حالات مزید خراب ہو جائیں گے۔ملبہ کہیں اور ڈالا جا رہا ہے 20 کروڑ روپے پر بکنے والے اپنے علاقہ کی مسجد میں نماز ادا نہیں کر سکتا ہے مجھے اعزاز حاصل ہے خانہ کعبہ کی چھت پر بھی نماز پڑھی ہے عمران خان ان کو ساڑھے تین سال سے ایکسپوز کر رہا ہے، بلو رانی وزیر خارجہ بن گیا یا بن گئی میں بتا رہا ہوں 31 مئی تک حل نکالیں۔

شیخ رشید نے کہا ضمانت کے لیے گیا تو صرف اس وجہ سے جاؤں گا کہ حالات خراب نہ ہوں، میرا بھتیجا مسنگ ہے بتاتے نہیں وہ کہاں ہیں، اس کی ٹریننگ ہونی چاہیے اس کا اندر رہنا ضروری ہےراشد شفیق کو پانچ مہینے رکھ لیں لیکن بتائیں وہ کہاں ہے، ہمارا خاندان عمران خان کی قربانی کے لیے منتخب ہوا-

سابق وزیر داخلہ نے کہا کہ آصف زرداری نے پنجاب میں خانہ جنگی کے لیے رانا ثناءاللہ کو وزیر داخلہ لگایا، الیکشن کمیشن بیٹھ کر بات کرے الیکشن کی تاریخ دے نواز شریف نے فوج کو گالیاں دیں، فوج بات دل میں رکھتی ہے-

فتنہ پرور شخص اس ملک پر مسلط رہا،74سالہ تاریخ میں چاند رات کو کوئی احتجاج نہیں ہوا ،رانا ثنا اللہ

قبل ازیں غیرملکی خبررساں ادارے کو دیئے گئے انٹرویو میں شیخ رشید احمد نے کہا تھا کہ فوج کے ساتھ تمام معاملات اچھے چل رہے تھے اور ہم سب ایک پیج پر تھے مگر اچانک ہمارے درمیان غلط فہمیاں پیدا ہوگئیں ، لیکن کچھ نہ کچھ ایسا ہوا ہے کہ ایم کیو ایم اور باپ نے ہمارا ساتھ چھوڑ دیا، آدھی ق لیگ چلی گئی، ہم سے کہیں تو غلطی ہوئی ہے ہ تحریک انصاف کو اداروں کےخلاف نہیں کھڑا ہونا چاہئےہمیں اداروں کے ساتھ مل کر الیکشن کی تاریخ طے کرنی چاہئےمیں اس میں ثالثی کا کردار ادا کروں گا، لیکن اگر عمران خان کی اداروں سے جنگ ہوجاتی ہے تو اس میں کوئی شک نہیں ہونا چاہئے کہ میں عمران خان کے ساتھ چٹان کی طرح کھڑا رہوں گا کیوںکہ عمران خان کو اس جنگ میں حق بجانب سمجھتا ہوں۔

شیخ رشید نے مسجد نبویﷺ میں پیش آنے والے واقعے سے متعلق کہا تھا کہ میں عاشق رسولﷺ ہوں اور اس فعل پر کہتا ہوں کہ یہ نہیں ہونا چاہئے تھا لیکن حقیقت یہ ہے کہ یہ لوگ جہاں بھی جائیں گے عوام اپنے جذبات کا اظہار کریں گے اور انہیں چور کہیں گے ، مدینہ میں تو شاید 5 سے 10 ہزار لوگ ہیں لیکن اگر یہ لوگ لندن چلے گئے تو ایک لاکھ افراد ان کے خلاف مظاہرہ کریں گے۔

50 فیصد کامیابی ملی ہے، ابھی خیبر پختونخوا اور بلوچستان میں بھی جیتنا ہے ،آصف علی…

انہوں نے کہا تھا کہ ہمارا ایک ہی مطالبہ ہے کہ جلد از جلد صاف اور شفاف انتخابات کی تاریخ دی جائے، اگر عوام نے ساتھ دیا اور اسلام آباد آگئےتوپھر تو ہم الیکشن کی تاریخ لئے بغیر وہاں سے نہیں جائیں گے، ورنہ ہماری سیاست غرق ہوجائے گی، ہم آر یا پار ہوجائیں گے عمران خان کبھی نہیں چاہتے کہ مارشل لا لگےوہ تو انتخابات چاہتے ہیں، وہ تو اس حکومت سے بھی مذاکرات اور بات چیت کے لئے تیار ہیں لیکن شرط یہ ہےکہ اگر حکومت انتخابات کی تاریخ کےحوالےسےبات کرےاورکوئی ان کی ذمہ داری لے ورنہ عمران خان ان کی شکلیں دیکھنے کو بھی تیار نہیں

پاک فوج کیخلاف پروپیگنڈا،معروف یو ٹیوب چینل نے سینئیر عہدیدار سے متعلق جعلی خبریں…