اگست میں جعلی حکومت مستعفی نہ ہوئی تو اگلا پڑاؤ کہاں ہو گا؟ مولانا فضل الرحمن نے واضح اعلان کر دیا

جمعیت علماء اسلام ف کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے کہا ہے کہ پاکستان کے ریاستی اداروں کو واضح کہنا چاہتا ہوں کہ ہم اس ملک کوپرامن دیکھنا چاہتے ہیں اور اسکی خاطر قربانیاں دیں، ملک کے آئین اور جمہوریت کا ساتھ دیا، لیکن اگر آپ بضد ہیں اور ناجائز ملک پر جبراً مسلط رہیں گے تو پھر ہم بھی مقابلے کیلئے تیار ہیں،

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق انہوں نے کہاکہ آج کا ملین مارچ آخری ہے اب ہمارا اگلا پڑاؤ اسلام آباد میں ہوگا، اگست کے مہینہ میں جعلی حکومت مستعفی ہو جائے وگرنہ اکتوبر میں انشاءاللہ اسلام آباد کا رخ کریں گے اور اس حکومت کا خاتمہ کردیں گے۔

کوئٹہ میں ملین مارچ سے خطاب کرتے ہوئے انہوں‌نے کہاکہ چین کی سرمایہ کاری کوضائع کردیاگیا، ہم جمہوریت کےساتھ کھڑے ہیں، ہم پاکستان کو ترقی کرتا دیکھنا چاہتے ہیں،

مولانا فضل الرحمن نے کہاکہ مہنگائی نےعوام کاجیناحرام کردیاہے، ریاست کی بقاء کا دارومدار معیشت پرہوتا ہے، ملکی معیشت کی کشتی ہچکولےکھارہی ہے،

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.