fbpx

ایوان اقبال میں پنجاب اسمبلی کا اجلاس، بجٹ پر بحث

گورنر پنجاب بلیغ الرحمان کے حکم پر بلایا گیا پنجاب اسمبلی کا 41 واں اجلاس ایوان اقبال میں اجلاس شروع ہو گیا.اجلاس کی صدارت پینل آف چیئرمین خلیل طاہر سندھو کررہے ہیں

اجلاس ایک گھنٹہ 30 منٹ کی تاخیر سے شروع ہوا ہے.اس اجلاس میں صرف حکومتی ارکان اسمبلی شرکت کریں گے.پاکستان تحریک انصاف اور مسلم لیگ ق کے ارکان اسمبلی نے ایوان اقبال میں جاری ہنجاب اسمبلی کے اجلاس کو غیر آئینی قرار دیا تھا اور کزشتی اجلاس جس میں حکومت کی جانب سے بجٹ پیش کیا گیا تھا میں شرکت نہیں کی تھی بلکہ اپورزیشن کی جانب سے سپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الہی کے اجلاس میں شرکت کی تھی.

اجلاس میں بجٹ پر بحث کا آغازکیا توپینل آف چیئرمین نے اپوزیشن لیڈر سبطین خان کوبجٹ پر بحث کی دعوت دی تاہم اپوزیشن لیڈرسبطین خان کے ایوان میں موجود نہ ہونے پر اجلاس پندرہ منٹ کیلئے ملتوی کردیا گیا .پینل آف چیئرمین خلیل طاہر سندھو کے مطابق اپوزیشن لیڈر سبطین خان نے کہا تھا کہ میں اجلاس میں آوں گا۔انہوں نے کہا کہ اپوزیشن لیڈر شاید راستے میں ہیں تب تک پندرہ منٹ انتظار کرلیتے ہیں ۔

زرائع کے مطابق ایوان اقبال میں ہونے والا حکومتی پنجاب اسمبلی کا اجلاس جاری ہے تاہم اجلاس میں حکومت کی تمام تر کوششوں کے باوجود حکومتی اراکین پنجاب اسمبلی کی تعداد نہ ہونے کے برابر ہے. حکومتی اراکین پنجاب اسمبلی نے ایوان اقبال کے اجلاس کو سنجیدہ نہیں لیا زعائر کے مطابق حکومتی اراکین پنجاب اسمبلی کی تعداد نہ ہونے کے باعث پینل آف چئیرمین طاہر خلیل سندھو نے پندرہ منٹ کے لیے اجلاس منعقد کیاجبکہ ایوان میں کہا ہم اپوزیشن لیڈر کا انتظار کر رہے ہیں سبطین خان آرہے ہیں

دوسری جانب اپوزیشن لیڈر سبطین خان نے حکومت کی جانب سے کسی بھی قسم کی دعوت یا رابطے کی بھی تردید کردی ہے سبطین خان کا کہنا ہے کہ جعلی اجلاس میں ہمارا کیا کام ؟حکومت پیر کے روز پنجاب اسمبلی کے آئینی اجلاس میں آئے.

وزیر اعلی پنجاب حمزہ شہباز شریف پنجاب اسمبلی کے اجلاس میں شرکت کیلئے ایوان اقبال پہنچ گئے .