افسوس:شہبازشریف کا سگی بھتیجی ستیاناس کررہی ہے: جلد شہبازشریف کےلیےبری خبرہوگی:اہم صحافی کادعویٰ

لاہور :افسوس شہبازشریف کا سگی بھتیجی ستیاناس کررہی ہے:بہت جلد شہبازشریف کے لیے بری خبرہوگی::اہم صحافی کا دعویٰ ،اطلاعات کے مطابق شریف خاندان کو قریب سے جاننے والے ایک سنیئر صحافی نے بڑے افسوس والی خبرسناکرسب کو ہلاکررکھ دیا ہے ، وہ کہتے ہیں‌کہ افسوس تواس بات کا ہے کہ سیاسی اختلافات اپنی جگہ مگرشہبازشریف کوسگی بھتیجی بہت زیادہ نقصان پہنچا رہی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق رانا عظیم نے بتایا کہ شہباز شریف کو سائیڈ لائن کر کے مریم نواز کو پارٹی کا صدر بنانے کی تیاریاں کی جا رہی ہیں۔ شہباز شریف پچھلی مرتبہ جب اپنی پیشی پر آئے تو اُس سے قبل بھی اُن کی جیل میں اور اُس کے علاوہ بھی کچھ ملاقاتیں ہوئیں۔رانا عظیم نے بڑے افسوس کا اظہارکرتے ہوئے کہا کہ سیاسی اختلافات اپنی جگہ مگرسچ یہ ہے کہ شہازشریف کو بیگانوں نے نہیں اپنوں نے تباہ کیا ہے اور اس میں ان کی سگی بھتیجی کا مرکزی کردار ہے

رانا عظیم کہتے ہیں کہ اس کے علاوہ بھی انہوں نے اس مرتبہ پیشی کے موقع پر اپنی کور کمیٹی کی ٹیم کو یہ پیغام پہنچایا ہے کہ اب آپ متحرک ہو جائیں نہیں تو مسلم لیگ ن کی صدر مریم نواز کو بنایا جا رہا ہے۔ میاں شہباز شریف کو مختلف ذرائع سے یہ خبر ملی ہے کہ انہیں بالکل کارنر کیا جا رہا ہے اور اُنہیں کارنر کیوں کیا جا رہا ہے ؟ جب محمد علی درانی کی ملاقات ہوئی تو اُس سے قبل پے رول پر رہائی کے دوران شہباز شریف نے نیشنل ڈائیلاگ کی بات کی تھی۔

رانا عظیم کہتے ہیں‌ کہ یہ بات سب پرعیاں ہوچکی ہے کہ ان معاملات پر مریم نواز بھی نالاں تھیں جبکہ نواز شریف کو بھی کہا گیا تھا کہ آپ کے بھائی آپ کے ساتھ نہیں رہے۔ میاں نواز شریف یہ ماننے کو تیار نہیں ہیں لیکن ان کے قریبی رفقا نے انہیں یہ یقین دہانی کروا دی ہے کہ اگر آپ شہباز شریف کا ساتھ دیں گے تو آپ کا بیانیہ دم توڑ جائے گا اور مسلم لیگ ن جو کہ آپ کی اپنی جماعت ہے ، آپ کے ہاتھ سے نکل جائے گی۔

رانا عظیم اس حوالے سے انکشاف کرتے ہوئے کہتے ہیں کہ امکان یہی ہے کہ اُس کے بعد ہوا یہ کہ میاں نواز شریف نے شہباز شریف کو بالکل کارنر کر دیا جائے۔ نواز شریف کی جانب سے یہ پیغام اُنکے قریبی رفقا کو پہنچا دیا گیا ہے جبکہ مریم نواز نے بھی یہ کہنا شروع کر دیا ہے کہ صرف میں ہی ایک ہوں جس کی وجہ سے ہجوم اکٹھا ہوتا ہے۔ نواز شریف کے بعد لوگ مجھے مسلم لیگ ن کا صدر دیکھنا چاہتے ہیں۔ رانا عظیم نے کہا کہ شاہد خاقان عباسی بیرون ملک کسی اور معاملات کے لیے گئے تھے۔

ابھی تو پارٹی شروع ہوئی ہے، دیکھنا ہو گا کہ کون کس کے ساتھ ہے۔ اگر پارٹی میں ایم این ایز اور ایم پی ایز کی تعداد دیکھی جائے تو وہ زیادہ شہباز شریف کے ساتھ ہیں، کیونکہ وہ استعفے نہیں چاہتے، وہ اداروں سے ٹکراؤ نہیں چاہئیے، وہ اپنے علاقوں میں ترقیاتی کام چاہتے ہیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.