fbpx

بلدیاتی انتخابات کا دوسرا مرحلہ ملتوی کرنے کا پشاور ہائیکورٹ کا فیصلہ معطل

بلدیاتی انتخابات کا دوسرا مرحلہ ملتوی کرنے کا پشاور ہائیکورٹ کا فیصلہ معطل

سپریم کورٹ نے خیبر پختونخوا بلدیاتی انتخابات کا دوسرا مرحلہ ملتوی کرنے کا پشاور ہائیکورٹ کا فیصلہ معطل کر دیا

سپریم کورٹ نے فریقین کو نوٹسز جاری کر دیئے ، پیر 14 فروری تک سماعت ملتوی کر دی گئی،جسٹس عائشہ ملک نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ پشاور ہائیکورٹ کو فیصلے سے پہلے الیکشن کمیشن کا موقف سننا چاہیے تھا، اس بات کی تصدیق نہیں ہوئی کہ خیبر پختونخوا میں موسمی حالات الیکشن میں رکاوٹ ڈال سکتے ہیں، جسٹس اعجاز الاحسن نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ محکمہ موسمیات کی رپورٹ کو الیکشن کمیشن نے دیکھنا تھا عدالت نے نہیں،پشاور ہائیکورٹ کو فیصلہ دینے کی اتنی جلدی کیا تھی؟ جسٹس اعجازالاحسن اور جسٹس عائشہ ملک پر مشتمل دو رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی

واضح رہے کہ پشاور ہائیکورٹ نے دوسرے مرحلے کے بلدیاتی انتخابات کا نوٹفکیشن معطل کر دیا تھا جسے الیکشن کمیشن نے سپریم کورٹ میں چیلنج کیا تھا، ہائیکورٹ نے الیکشن کمیشن کو بلدیاتی انتخابات کے دوسرے مرحلے کو رمضان کے بعدکرانے کا حکم دے دیا، فیصلے میں کہا گیا کہ مارچ میں پہاڑی علاقوں میں سردی اور برف باری کی وجہ سے الیکشن ممکن نہیں محکمہ موسمیات کے مطابق مارچ میں بارشوں اور پہاڑوں پر برف کا امکان ہے، صوبائی حکومت اور محکمہ موسمیات نے الیکشن کمیشن کو مراسلہ بھی جاری کیا، حکومت اور ڈی جی محکمہ موسمیات رپورٹ کے باوجود الیکشن کمیشن نے فیصلہ کن اقدام نہیں اٹھایا،الیکشن کمیشن اس ضمن میں اپنے فرائض کی انجام دہی میں ناکام رہا،بلدیاتی انتخابات کا دوسرا مرحلہ زیادہ تر پہاڑی علاقوں میں منعقد ہونا ہے، درخواست گزاروں کا موقف ہے کہ برف باری میں ووٹرز کا گھروں سے نکلنا ممکن نہیں برف والے علاقوں میں الیکشن عملہ کو بھی مشکلات درپیش ہوگی موجودہ حالات کے تناظر میں پہاڑی علاقوں میں انتخابات کا انعقاد ممکن نہیں لگتا الیکشن کمیشن انتخابات کے دوسرے مرحلے کا انعقاد رمضان کے بعد کرنے شیڈول جاری کرے،

یاد رہے پہلے مرحلے میں خیبرپختون خواہ کے 17 اضلاع میں بلدیاتی انتخابات کا انعقاد کیا ‏گیا تھا، جس میں وفاقی اور صوبائی حکومتی جماعت تحریک انصاف کو بدترین شکست کا سامنا ‏کرنا پڑا جبکہ جمعیت علما اسلام پاکستان (فضل الرحمان گروپ) نے حیران کن نتائج دئیے۔

الیکشن میں ہونے والی شکست کے بعد وزیراعظم عمران خان نے گورنر خیبرپختون خواہ سے ‏رپورٹ بھی طلب کی تھی جبکہ پنجاب کے بلدیاتی انتخابات کی نگرانی خود کرنے اور امیدوار کے ‏معاملے میں کارکنان کے تحفظ دور کرنے کا اعلان بھی کیا ہے۔

عمران خان،عثمان بزدار آرٹیکل 6 کی خلاف ورزی کے مرتکب ہوئے،احسن اقبال

بڑا دھماکہ، چوری پکڑی گئی، ثاقب نثار کی آڈیو جعلی ثابت،ثبوت حاضر

بڑے بڑے لوگوں کی فلمیں آئیں گی، کوئی سوئمنگ پول ، کوئی واش روم میں گرا ہوا ہے، کیپٹن رصفدر

آڈیو لیک،عدلیہ پر الزامات، اسلام آباد ہائیکورٹ میں ایک اور درخواست دائر

روز کچھ نہ کچھ چل رہا ہوتا ہے آپ کس کس بات کی انکوائری کرائیں گے؟ آڈیو لیکس پر عدالت کے ریمارکس

زرداری نے کہا تھا پی ٹی آئی کا جنم خیبر پختونخوا سے ہوا،وہیں دفن ہو گی

نہیں دیکھیں گے کہ کس کا بھائی ڈی ایس پی ہے یا اے سی،چیف الیکشن کمشنر برہم

خواتین کو پولنگ سٹیشنز سے اغواء کرنا انتہائی سنگین واقعہ ہے،چیف الیکشن کمشنر برہم

یہ رویہ رکھا تو ہمیشہ کیلئے الیکشن بھول جائیں گے،چیف الیکشن کمشنر کے ریمارکس

بلدیاتی الیکشن کا دوسرا مرحلہ ملتوی کرنیکا مطالبہ آ گیا

ہم اپنے پاس موجود ویڈیو دے دیں تو حکومت مشکل میں پڑ جائے گی،ایسا کس نے کہہ دیا؟

پریذائیڈنگ افسران کا اغوا ہونا عام بات نہیں،چیف الیکشن کمشنر برہم

خیبر پختونخوا میں بلدیاتی انتخابات کے دوسرے مرحلے کا اعلان

بلدیاتی الیکشن کا دوسرا مرحلہ ملتوی کرنیکا مطالبہ آ گیا