fbpx

بارش کا پانی گھروں تک آ گیا،نلکوں میں نہیں آ رہا،سندھ حکومت جواب دے، ایم کیو ایم

بارش کا پانی گھروں تک آ گیا،نلکوں میں نہیں آ رہا،سندھ حکومت جواب دے، ایم کیو ایم

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق ایم کیو ایم رہنما خواجہ اظہار نے کہا ہے کہ کراچی پر جعلی ڈپٹی کمشنر کو مسلط کیا گیا

خواجہ اظہار کا کہنا تھا کہ حکومت سندھ لطیفے بازی کر رہی ہے،سندھ حکومت کے وزراکبھی سول اسپتال گئے بھی نہیں ہوں گے،سندھ حکومت سے سوال ہے کہ اپنے اسپتالوں کی کارکردگی بتاوَ ،اب تو حب ڈیم بھی بھر گیا لیکن نلکوں سے پانی غائب ہے،بارش کا پانی اب توگھروں تک آ گیا،نلکوں میں نہیں آ رہا،بارشیں شروع ہونے سے پہلے ہی کراچی کچرے کا ڈھیربن گیا،سندھ کے باشندوں سے کہنا چاہتا ہوں ڈاکووَں کو پیسے نہ دیں،اگر ہم وفاقی حکومت سے پیسے لائے ہیں تو کام کر رہے ہیں،سندھ کے وزرا کہتے ہیں محکمہ موسمیات نے نہیں بتایا کہ بارش ہوگی کراچی میں پانی کی قلت ہے ،نلکوں میں پانی نہیں آرہا،کراچی میں لوگ بوند بوند کو ترس گئے ہیں،

خواجہ اظہار کا مزید کہنا تھا کہ کراچی کا پیسہ شہر پر نہیں، سندھ میں لگ رہا ہے، شہر کےحالات بد سے بدتر ہوتے جا رہے ہیں، سندھ حکومت لوگوں کو بےگھر کرنے کیلئے تیار ہے، آپ نے ذوالفقار آباد بنانے کیلئے بڑی تیزی دکھائی،بارشیں شروع ہونے سے پہلے ہی شہر کچرے کے ڈھیر کا منظر پیش کرنے لگا ھے۔کے الیکٹرک کی بے حسی بھی عروج پر ھے۔واٸسرے سندھ اپنا پیادہ بطور ایڈمنسٹریٹر لگانا چاہتے ہیں۔سندھ حکومت اپنی کارکردگی کا جواب دے،