fbpx

بارشوں سے تھر کے باشندوں کے چہرے کھل اٹھے،بنجر زمینوں پر ہل چلا کر فصلوں کی کاشت شروع کردی

مون سون کی بارشیں تھر کے باسیوں کے لیے کسی رحمت سے کم نہیں ہیں حالیہ بارشوں کے بعد تھر کے مقامی افراد میں خوشی کی لہر دوڑ گئی ہے اور انہوں نے اپنی بنجر زمینوں کو آباد کرنے کے لیے ہل چلانا شروع کردیا ہے۔

باغی ٹی وی : تھر کے لوگوں کا ذریعہ معاش پالتو جانور اور زرعی زمینیں ہیں لیکن وہاں تک دریائے سندھ کا پانی نہ پہنچنے اور حکومتی وسائل نہ ہونے کے باعث تھری باشندے سال بھر بارشوں کا انتظار کرتے ہیں۔ بارشوں کی آمد کے ساتھ ہی ان کے چہرے خوشی سے کھل اٹھتے ہیں اور وہ اپنے اہل خانہ کے ہمراہ بنجر زمینوں کو آباد کرنا شروع کردیتے ہیں۔

حالیہ بارشوں کےبعد تھری باشندوں نےاپنی بنجر زمینوں پر ہل چلاکر کاشت کرناشروع کردی ہے، صحرائےتھر میں جو فصلیں کاشت کی جاتی ہےان میں گوار،باجرہ،تل ،مختلف دالیں سبزیاں وغیرہ شامل ہیں جس سے ان کا سال بھر کا راشن جمع ہوتا ہے۔ بارشیں نہ ہونے کی صورت میں قحط سالی تھر کے باسیوں کا مقدر بنتی ہے اور ان کی نظریں حکومتی امداد کی منتظر ہوجاتی ہیں۔

لوگوں کو امید ہےکہ حالیہ بارشوں کے بعد ملک بھر سے ہرسال کی طرح سیاح اور عوام تھر خصوصاً ننگرپارکر کی خوبصورتی سے لطف اندوز ہونے کےلیے آئیں گے.