زیتون اور روغن زیتون کی اہمیت اور فوائد قرآن و حدیث کی روشنی میں

حضرت ابو ہریرہ رضی اللہ تعالی عنہ روایت کرتے ہیں کہ آپ صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم نے فرمایا زہتون کھاؤ اور اسے لگاؤ کیونکہ یہ پاک اور مبارک ہے اور اس میں ستر بیماریوں سے شفا ہے جن میں ایک کوڑھ بھی ہے قرآن مجید میں زیتون اور اس کے تیل کے بار بار ذکر نے اسے شہرت دوام عطا کی ہے سورۃ الانعام سورۃ النور سورۃ النحل اور سورۃ التین میں اللہ تعالی نے زیتون کے درخت کو ایک مبارک یعنی برکت والا درخت قرار دیا ہے اس کے پھل کو اہمیت عطاء فرمائی

زیتون ایک درخت ہے جو تین میٹر کے قریب اونچا ہو تا ہے اس می بی کی شکل کا پھل لگتا ہے جو غذائیت سے بھر پور ہے لیک اپنے ذائقے کی وجہ سے پھل کی صورت میں زیادہ مقبول نہیں اس کے باوجود ترکی اٹلی اور یونان اور مشرقی وسطی میں اس کا پھل بڑے شوق سے کھایا جاتا ہے جبکہ یورپ میں اس کا اچار شوق سے کھایا جاتا ہے یہ درخت یورپ کیلیفورنیا اٹلی اور آسٹریلیا کے علاوہ دیگر ممالک سے درآمد کیا جاتا ہے

زیتون کا پھل زیتونہ کہلاتا ہے اس پھل سے جو تیل حاصل کیا جاتا ہے اسے روغن زیتون کہا جاتا ہے زیتون اور روغن زیتون کے بے شمار فوائد اور خواص ہیں روغن زیتون سب سے زیادہ پیٹ کے امراض کے لئے شافی اور مفید ہوتا ہے یہ پتھری کو توڑ کر نکالتا ہے اور قبض کشا بھی ہے معدے کے افعال کو درست کر کے بھوک بڑھاتا ہے اور آنتوں کے لئے بھی نہایت مفید ہے اس کے استعمال سے پتے کی پتھری ٹوٹ کر خارج ہو جاتی ہے زیتون کا تیل تھوڑی مقدار میں دودھ کے ساتھ ملا کر پینے سے السر سے نجات ملتی یہے اور معدے کی تیزابیت ختم ہو تی ہے دائمی اور پرانی قبض ختم کرنے کے لئے ایک تولہ روغن زیتون کو جو کے گرم پانی میں ڈال کر پئیں تو دو تین دن کے اندر قبض سے نجات مل جاتی ہے

روغن زیتون کو دمہ کے مرض سے بچنے کے لئے بھی استعمال کیا جاتا ہے اس کے لئے شہد اور زیتوان کے برابر وزن کے ساتھ گرم پانی میں ملا کر پینا چاہیئے مستقل استعمال سے دمہ ختم ہو جاتا ہے نزلہ زکام اور کھانسی بھی مستقل استعمال سے ختم ہو جاتے ہیں زیتون کا تیل پسینہ خارج کرنے کا موجب بنتا ہے جسمانی اعضاء کو قوت اور رعنائی بخشتا ہے یہ جلد کے تمام بہرونی عوارض میں مفید ہوتا ہے زیتون کی مالش سے چیچک اور ذخم کے داغ دھبے دور ہو جاتے ہیں ہیں آنکھوں کی کئی بیماریوں سے افقے کے لئے سلائی سے زیتون کا تیل آنکھوں میں لگائیں تو افاقہ ہوتا ہے بالوں کو گرنے سے روکنے اور سفید ہونے سے بچانے کے لئے روزانہ اس سے مالش بہت مفید ہے موسم سرما میں استعمال کرنے سے بالوں سے خشکی دور ہو جاتی ہے خواتین اپنے بازوؤں ہاتھوں اور چہروں کو نکھارنے اور گداز رکھنے کے لئے زیتون کے تیل کی مالش معمول بنا لیں یہ جلد کے لئے نہایت مفید ہے

بچھو شہد کی مکھی بھڑ وغہرہ کے کاٹے پر روغن زیتون ملنے سے جلد ہی اس کا اثر زائل ہو جاتا ہے اور درد ختم ہو جاتا ہے حکماء کے مطابق زیتون کے تیل میں خرگوش کا گوشت پکا کر کھانے سے عورتوں میں بانجھ پن ختم ہو سکتا ہے زیتون کے تیل سے مالش کرنے سے
اعضاء کو قوت حاصل ہوتی ہے پٹھوں کا درد جاتا رہتا ہے چیرے کو بشاشت دیتا ہے اسے مرہم میں شامل کرنے سے زخم بہت جلد بھر جاتے ہیں یہ نیک لوگوں کی غذا اور سر کا تیل بھی ہے دست آور ہے آنتوں کے کیڑوں کو نکالتا ہے آنکھوں کا موتیا کم کرتا ہے مسوڑھوں کو مضبوط بناتا ہے رکٹس اور بچوں کے دق میں مالش سے کافی فائدہ ہوتا ہے زیتون کے تیل میں پکے ہوئے کھانے مٹھائیاں اور اچار بھی ذائقے میں منفرد ہوتے ہیں

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.