fbpx

ملکی تاریخ میں پہلی بار بیوروکریسی کشمیریوں کی حمایت میں عملی طور پر دفاتر سے باہر نکل آئی

لاہور : ہر پاکستانی کشمیری ہے یہ دعویٰ نہیں بلکہ ہر پاکستانی صدق دل سے یہ ثابت بھی کررہا ہے. پاکستان کی تاریخ میں پہلی مرتبہ بیوروکریسی نے دفاتر سے نکل کر کشمیریوں بھائیوں کے ساتھ اظہار یکجہتی کیا . سول سروس کے چھوٹے بڑے تمام افسران نے اس موقع پر اس عہد کے اعلان کیا کہ وہ اپنے کشمیری بھائیوں کی آزادی کے لیے آخری حد تک جائیں‌گے.

تفصیلات کے مطابق کشمیریوں کیساتھ اظہار یکجہتی کیلئے مختلف صوبائی محکموں کے سیکرٹریز ریلیوں کی قیادت کرتے ہوئے استنبول چوک پہنچے، جہاں افسران و ملازمین نے پندرہ منٹ کھڑے ہو کر کشمیریوں سےاظہاریکجہتی کیا، اس موقع پر مختلف صوبائی محکموں سیکرٹریز کا کیا کہنا ہے آئیے آپ کو بتاتے ہیں۔

یہ بھی یاد رہے کہ بیورکریسی کو بھی کشمیریوں سے اتنی ہی محبت ہے جتنے کسی دوسرے محب وطن پاکستان کو ، فرق صرف یہ ہے کہ پہلے والی حکومتوں نے علامتی طور پر تو کئی بار کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کیا لیکن موجودہ حکومت نے ہر پاکستانی کو موقع دیا کہ وہ اپنے جزبات کا اظہار کرکے کشمیری مسلمانوں کے یہ پیغام دے کہ ہم تیار ہیں اور خون کے آخری قطرے تک کشمیریوں کی مدد کرتے رہیں گے ، اسی تناظر میں آج کے دن پوری قوم نے یک زبان ہو کر بھارت سمیت پوری دنیا کو یہ پیغام دیا ہے کہ ہم اپنے کشمیری بھائیوں کیساتھ ہیں اور کشمیر کی آزادی تک چین سے نہیں بیٹھیں گے۔