fbpx

بھارت میں 87 سالہ خاتون کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا

نئی دہلی: بھارتی دارالحکومت کے علاقے تلک نگر میں معمر خاتون کو نامعلوم شخص نے جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔

باغی ٹی وی : بھارتی میڈیا کے مطابق تلک نگر میں ایک ضعیف خاتون اپنی 65 سالہ بیٹی کے ہمراہ رہتی تھیں بیٹی کے چہل قدمی کے لیے جانے کے بعد ایک شخص گھر میں داخل ہوا اور 87 سالہ والدہ کیساتھ جنسی زیادتی کی۔

بھارتی خاتون صحافی کو بی جے پی کارندوں کیجانب سے قتل اور ریپ کی دھمکیاں

بیٹی چہل قدمی سے واپس گھر آئی تو والدہ کے کپڑے پھٹے ہوئے تھے اور زخمی ہوجانے کے باعث ان کے جسم سے خون بہہ رہا تھا۔ بزرگ خاتون کو اسپتال منتقل کیا گیا۔

جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے والے شخص نے گھر سے موبائل فون اور نقدی بھی چرائی تھی پولیس نے مقدمہ درج کرکے ملزم کی تلاش شروع کردی ہے جب کہ 87 سالہ خاتون کا میڈیکل چیک اپ کرایا جائے گا۔

واضح رہے کہ بھارت میں جنسی زیادتی کے کیسز میں اضافہ ہوتا جا رہا ہے اور عالمی میڈیا تک میں ہندوستان کی شہرت ریپستان کی ہوگئی ہے جہاں گائے تو محفوظ ہے لیکن خواتین نہیں۔

شادی سے انکارپر 24 سالہ لڑکی پر تیزاب پھینکنے والا ملزم گرفتار

خیال رہے کہ حال ہی میں سلم کش فسادات کا ذمہ دار مودی کو ٹھہرانے والی صحافی کو بی جے پی کے غنڈوں کی جانب سے زیادتی اور قتل کی دھمکیاں دی گئیں اپنی کتاب میں گجرات مسلم کش فسادات کا ذمہ دار اس وقت کے وزیراعلیٰ نریندر مودی کو قرار دینے والی خاتون صحافی رعنا ایوب کو بی جے پی کے غنڈوں کی جانب سے زیادتی اور قتل کی دھمکیاں دی گئیں-

صحافی رعنا ایوب نے ’گجرات فائلز‘ نامی کتاب لکھی تھی جس میں 2002 میں گجرات میں ہونے والے مسلم کش فسادات کا ذمہ دا ر اس وقت کی بی جے پی حکومت کو ٹھہرایا تھا۔

انتہا پسند ہندووں کی ایک اور سازش،بھارت کو” ہندو ریاست” بنانے کا مطالبہ