بھارت نے 83 لڑاکا طیارے بھارتی فضائیہ میں شامل کرنے کے لیے بڑی ڈیل کر لی

مودی سرکار کی 83 لڑاکا طیارے بھارتی فضائیہ میں شامل کرنے کے لیے بڑی ڈیل کر لی
باغی ٹی وی : مودی حکومت بھارتی فضائیہ میں 83 لڑاکا طیارے شامل کرنے کے لیے بڑی ڈیل کی ہے . بھارت اس سلسلے میں گھریلو ساختہ طیارے شامل کر کے بھارتی فضائیہ کی ضرورت کو پورا کرنا چاہتا ہے .

​ تیجاس ایم کے ون اے لائٹ کومبیٹ ایئرکرافٹ میں کئی صلاحیتیں موجود ہیں۔انڈیا کے وزیر دفاع راجناتھ سنگھ نے اس بارے میں ٹویٹ کی کہ ‘ایل سی اے تیجاس آنے والے برسوں میں انڈین ایئرفورس کے لڑاکا طیاروں کی ریڑھ کی ہڈی ہوگا۔ ایل سی اے تیجاس میں نئی ٹیکنالوجی ہے، جس میں زیادہ تر کا استعمال (انڈیا میں) پہلے کبھی نہیں ہوا۔’

نریندر مودی نے ایک خودمختار ہندوستان کے لئے ایک پرچم بردار مہم چلائی ہے ، جس کے تحت ان کی حکومت چاہتی ہے کہ کمپنیاں درآمدات کو کم کریں ، گھریلو پیداوار میں اضافہ کریں اور عالمی سپلائی چین میں بڑا کردار ادا کریں۔

اس خریداری میں ڈیزائن اور مینوفیکچرنگ کے شعبوں میں 500 کے قریب ہندوستانی کمپنیاں ایچ اے ایل کے ساتھ مل کر کام کریں گی۔
کمپنی کی ویب سائٹ کے مطابق ، لائٹ کامبیٹ ہوائی جہاز ، جس کا نام "تیجاس” ہے ، ایک ہی انجن سپرسونک فائٹر طیارہ ہے جو ایچ اے ایل نے بنایا ہے ، اور کمپنی کی ویب سائٹ کے مطابق ، (1،975.68 کلومیٹر فی گھنٹہ) تک کی رفتار حاصل کرسکتا ہے۔

گذشتہ سال اگست میں فیصلہ کیا گیا کہ ہندوستان ملکی پیداوار کو بڑھانے کی کوشش میں 101 فوجی سامان کی اشیاء کی درآمد روک دے گا۔ابتدائی تجارت میں ایچ اے ایل کے حصص کی قیمت 13.7 فیصد سے بڑھ کر 1،048 روپے ہوگئی ، یہ اگست کے آخر سے ان کی بلند ترین سطح ہے ، اور 0712 جی ایم ٹی کے مطابق اس میں 10.2 فیصد کا اضافہ ہوا ہے۔6بلین ڈالر کی ڈیل کی پے

نہوں نے مزید کہا کہ ان طیاروں کا معاہدہ انڈیا کی دفاعی صنعت میں بڑا قدم ہے۔وزیر دفاع کا مزید کہنا تھا کہ اس معاہدے سے ملک میں نئی نوکریاں بھی پیدا ہوں گی۔
بدھ کو جاری ہونے والے ایک بیان حکومت کا کہنا تھا کہ 73 تیجاس ایل سی اے لڑاکا طیارے انڈین ایئرفورس کی ضروریات پوری کرنے میں کام آئیں گے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.