قبول ہے ایک گانا تھا ان کا اصل نکاح نہیں تھا کہ انہوں نے ایک مشہور مسجد کے مذہبی تقدس کو پامال کر دیا مشی خان

معروف اداکارہ،میزبان اور گلوکارہ مشی خان کا کہنا ہے کہ قبول ہے ایک گانا تھا بلال سعید اور صبا قمر کا اصل نکاح نہیں تھا کہ انہوں نے ایک مشہور مسجد کے مذہبی تقدس کو داغدار کردیا ہے-

باغی ٹی وی: صبا قمر اور بلال سعید کے گانے قبول ہے کی شوٹنگ کے لئے مسجد وزیر خان میں بنائی گئی ویڈیو پر جہاں عوام ،مذہبی اورمعروف شخصیات غم و غصے کا اظہار کر رہی ہیں وہیں میزبان،گلوکارہ اور اداکارہ ،شی خان نے بھی شدید ردعمل دیتے ہوئے غصے کا اظہار کیا ہے –


مشی خان نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر میں ایک ویڈیو شئیر کی جس مین انہوں نے کہا کہ جس طریقے سے پاکستان کے دو بڑے آرٹسٹوں بلال سعید اور صبا قمر نے مسجد وزیر خان میں جا کر اپنے آنےوالے گانے قبول ہے کے لئے پرفارم کیا ویڈیو بنائی اس کی وہ بھرپور مذمت کرتی ہیں-

انہوں نے کہا کہ اگر یہ ان کی حقیقی زندگی میں ہوتا کہ وہ مسجد مین جا کر نکاح کر رہے ہیں تو ہم سب خوش ہوتے لیکن ان کی اس ویڈیو اور گانے کے شوٹ پر میں مذمت کرتی ہوں-

انہوں نے کہا کہ یہ عمل انتہائی قابل افسوس ہے کیوں کہ صبا قمر اور بلال سعید مشہور شخصیات ہیں جو لوگوں کو متاثر کرتی ہیں بطور اداکار ہماری ذمہ داری ہے کہ ہم ایسی چیزوں کو پروموٹ نہ کریں-

صبا قمر کی مسجد وزیرخان میں ڈانس کی ویڈیو وائرل

صبا قمر نے بلال سعید کی پیشکش قبول کر لی

مسجد میں گانے کی شوٹنگ پر صبا قمر اور بلال سعید کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی، سیکرٹری اوقاف پنجاب

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.