fbpx

پنجاب اسمبلی کی تحلیل کے بعد کب ہوں گے نئے الیکشن؟

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق وزیراعلیٰ پنجاب نے پنجاب اسمبلی کی تحلیل کے لئے گورنر پنجاب کو سمری ارسال کر رکھی ہے ، آج شب اسمبلی تحلیل ہوتی ہے تو نگران سیٹ اپ آئے گا اور اگلے نوے روز میں الیکشن ہوں گے، اس حوالہ سے ن لیگ کی قیادت کا اجلاس ہوا جس میں فیصلہ کیا گیا ہے کہ پنجاب اسمبلی کی تحلیل کے بعد 12 اپریل کو الیکشن کروائے جائیں گے، نجی ٹی وی نے دعویٰ کیا ہے کہ ن لیگ کی سینئر ترین قیادت کا اجلاس لاہور میں ہوا جس کی صدارت وزیراعظم شہباز شریف نے کی،اجلاس میں پنجاب اسمبلی کی تحلیل اور آئندہ صوبائی انتخابات کے حوالے سے وزیراعظم شہباز شریف نے فیصلے سے پارٹی رہنماؤں کو آگاہ کیااجلاس میں وزیر اعظم نے پارٹی ر ہنماوں کو پنجاب میں اپنے حلقوں میں انتخابی مہم چلانے کی ہدایت بھی کی جب کہ اجلاس میں پنجاب اسمبلی ٹوٹنے کے بعد 12 اپریل کو الیکشن کرانے کا فیصلہ بھی کیا گیا

پنجاب اسمبلی کی تحلیل کے بعد نگراں وزیر اعلیٰ کا تقرر کرنے کیلئے لیڈر آف ہاؤس اور لیڈر آف اپوزیشن کو مجوزہ ناموں میں سے کسی ایک پر 3 دن میں اتفاق کرنا ہو گا عدم اتفاق کی صورت میں معاملہ اسپیکر پنجاب اسمبلی کو بھیج دیا جائے گا جو اپوزیشن اور حکومتی بنچوں کے 3 تین ارکان کی کمیٹی تشکیل دیں گے ،میڈیا رپورٹس کے مطابق آئیں کے آرٹیکل 224 اے کی شق 2 سے 4 کے مطابق لیڈر آف دی ہاؤس اور اپوزیشن لیڈر کا 3 روز کے اندر کسی ایک نام پر اتفاق کرنا ضروری ہے

پنجاب میں نگران وزیراعلیٰ کون ہو گا؟ اس حوالہ سے سیاسی جماعتوں نے مشاورت شروع کر دی ہے، تا ہم ابھی تک کسی کا نام سامنے نہیں آ سکا، پنجاب اسمبلی کی تحلیل کے بعد ہی نام سامنے آ سکیں گے، تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے اس حوالہ سے اجلاس طلب کر رکھا ہے، اجلاس میں اپوزیشن لیڈر حمزہ شہباز کو نگران وزیراعلیٰ کے ناموں کے لیے خط لکھنے کی منظوری دی جائے گی ۔عمران خان پارٹی رہنماوں کے ساتھ نگران سیٹ کیلئے ناموں پر مشاورت کریں گے۔عمران خان وزیراعلیٰ پنجاب کے ساتھ بھی نگران سیٹ اپ پر مشاورت کریں گے نگران وزیراعلیٰ پنجاب کے لیے اچھی شہرت کے حامل بیوروکریٹس، سابق جج صاحبان اور سماجی شخصیات کے ناموں پر غور کیا جائے گا۔عمران خان مسلم لیگ ق سے مشاورت کے بعد تین ناموں کی حتمی منظوری دیں گے

سعودی عرب میں طوفان ابھی تھما نہیں، فوج کے ذریعے تبدیلی آ سکتی ہے،سعودی ولی عہد کو کن سے ہے خطرہ؟ مبشر لقمان نے بتا دیا

محمد بن زید النہیان متحدہ عرب امارات کے نئے صدر بن گئے،

وزیراعلیٰ پنجاب چودھری پرویز الٰہی سے متحدہ عرب امارات کے سفیر حماد عبید ابراہیم سلیم الزیبی کی ملاقات

مقامی ہوٹل میں متحدہ عرب امارات کے 51ویں قومی دن کی تقریب منعقد ہوئی

دوسری جانب ترجمان وزیر اعلیٰ و پنجاب حکومت مسرت جمشید چیمہ کا کہنا ہے کہ اسمبلی کی تحلیل کا اعلامیہ جاری نہ کرنے کی صورت میں بھی رات دس بجے کے بعد اسمبلی آئینی طور پر تحلیل ہو جائے گی پی ڈی ایم الیکشن سے بھاگنے کی بجائے سیاسی میدان میں تحریک انصاف کا مقابلہ کرے اس وقت پی ڈی ایم کراچی بلدیاتی انتخابات سے بھاگنے کے لیے سر توڑ کوشش کر رہی ہے پہلے حلقہ بندیوں کا نوٹیفکیشن، اس کے بعد تھریٹ الرٹ اور الیکشن کمشن بھی فوراً ان کے ‘خط’ پر اجلاس بلا لیتا ہے کہنے کو یہ سیاسی جماعتیں ہیں لیکن عوام سے اس قدر خوفزدہ ہیں کہ الیکشن سے بھاگ رہی ہیں آصف علی زرداری نے ن لیگ کو پنجاب میں ذلیل کروا کر پچھلا تمام حساب چکتا کر دیا ن لیگ کے رہنماؤں کو سمجھ نہیں آ رہی کہ کس دیوار میں اپنا سر ماریں