fbpx

کراچی بلدیاتی انتخابات، سندھ حکومت کا ایک اور مراسلہ

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق کراچی میں الیکشن کمیشن نے بلدیاتی الیکشن کل اتوار کو کروانے کا اعلان کر رکھا ہے

سندھ حکومت الیکشن کروانے کو بالکل بھی تیار نہیں ہے،الیکشن کے لئے انتظامات ہو چکے ہیں، اب سندھ حکومت کا نیا مراسلہ سامنے آیا ہے جس میں بلدیاتی ایکٹ 2013 کے سیکشن 34 کا ذکر کیا گیا ہے، مراسلے میں کہا گیا ہے کہ 12 جنوری کو سندھ حکومت نے حیدرآباد کراچی میں حلقہ بندیوں کو ختم کردیا گویا اب نئی حلقہ بندیاں لازمی ہیں،انتخابات نئی حلقہ بندی تک ممکن نہیں،سندھ حکومت کے مراسلے کے بعد الیکشن کمیشن کا ہنگامی اجلاس متوقع ہے

کراچی میں الیکشن ایک بار پھر ملتوی ہونے کے قوی امکانات ہیں، اگر الیکشن کمیشن نے الیکشن ملتوی نہ کئے تو آرڈیننس لایا جا سکتا ہے جس کے بعد الیکشن ملتوی ہو جائیں گے. جب تک بلدیاتی ایکٹ کے صفحہ نمبر 14 پر موجود شق نمبر 13 میں ترمیم کے زریعے یونین کونسل کی تشکیل کا فارمولہ تبدیل نہیں کیا جائے گا الیکشن کمیشن اپنی آئینی ذمہ داری نبھاتے ہوئے بلدیاتی انتخابات کروائے گا۔ آرڈینینس کے بعد الیکشن کمیشن جس کا ہنگامی اجلاس جاری ہے وہ خود ہی معطل کردے گا جیسے اسلام آباد میں ہوا

 شہر قائد کراچی میں بلدیاتی الیکشن کل اتوار کو ہوں گے

بلدیاتی انتخابات کیلئے پالیس کی جانب سےسیکیورٹی پلان مرتب

تم آرڈیننس لاؤ گے ہم اس کا بھی عدالتوں میں مقابلہ کریں گے، حافظ نعیم الرحمان

موجودہ حالات میں حکومت کا ساتھ جاری رکھیں،گورنر سندھ کی خالد مقبول صدیقی سے…

اچھوتے آئیڈیے کی مدد سے ایک بے قیمت کچرے کو لگڑری آرٹ کے نمونے میں بدلنے کا فن
2022 میں سوشل میڈیا ایپ کی مقبولیت میں غیرمعمولی اضافہ
اغوا برائے تاوان کے الزام میں سی ٹی ڈی افسر کا ڈرائیور گرفتار
معاشی غیریقینی کے باوجود:انڈس موٹرز نے گاڑیوں کی قیمتوں میں 12 لاکھ تک اضافہ کردیا