سرکاری ملازمین کیلئے بری خبر،بجٹ میں تنخواہیں نہ بڑھیں، اب عید پر چھٹیاں بھی کم کرنیکا فیصلہ

سرکاری ملازمین کیلئے بری خبر،بجٹ میں تنخواہیں نہ بڑھیں، اب عید پر چھٹیاں بھی کم کرنیکا فیصلہ

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق عید الاضحیٰ کی تعطیلات بارے وزیراعظم عمران خان نے ہدایت کی ہے کہ سرکاری اداروں میں صرف عید والے دن کی چھٹی کی گئی

رواں برس عید الاضحیٰ 31 جولائی جمعہ کو متوقع ہے،جمعہ کی ایک چھٹی کے ساتھ ہفتہ اتوار دو مزید چھٹیاں ہوں گے اور پیر سے سرکاری دفاتر معمول کے مطابق کھلیں گے

نجی ٹی وی کے مطابق کہ وزیراعظم عمران‌ خان نے ہدایت کی ہے کہ عید کے مخصوص ایام کےعلاوہ کوئی اضافی چھٹی نہ دی جائے، عید جمعہ کو ہونے کی صورت میں صرف ایک چھٹی دی جائے گی۔

وزیراعظم کے معاون خصوصی شہباز گل کا کہنا ہے کہ صورتحال کو سامنے رکھتے ہوئے عیدپر کم سے کم چھٹیاں کرنے کا اصولی فیصلہ کیاگیا، عید کے تین دن کی چھٹی رہے گی لیکن اضافی چھٹی نہیں ہوگی ، کوشش ہے کہ عید پر گھومنا پھرنا کم ہو۔

شہباز گل نے کہا کہ وزیراعظم کی پہلے دن سے حکمت عملی اسمارٹ لاک ڈاؤن کی ہے، عوام عید سادگی سے منائیں اور ایس او پیز پرعملدرآمد کریں۔

واضح رہے کہ عید الفطر پر سات چھٹیاں دی گئی تھیں اب عید قربان پر صرف ایک چھٹی دی جائے گی

کرونا لاک ڈاؤن، شادی کی خواہش رہی ادھوری، پولیس نے دولہا کو جیل پہنچا دیا

کرونا لاک ڈاؤن، گھر میں فاقے، ماں نے 5 بچوں کو تالاب میں پھینک دیا،سب کی ہوئی موت

کرونا میں مرد کو ہمبستری سے روکنا گناہ یا ثواب

لاک ڈاؤن ختم کیا جائے، شوہر کے دن رات ہمبستری سے تنگ خاتون کا مطالبہ

لاک ڈاؤن، فاقوں سے تنگ بھارتی شہریوں نے ترنگے کو پاؤں تلے روند ڈالا

کرونا مریض اہم، شادی پھر بھی ہو سکتی ہے، خاتون ڈاکٹر شادی چھوڑ کر ہسپتال پہنچ گئی

کرونا لاک ڈاؤن، رات میں بچوں نے کیا کام شروع کر دیا؟ والدین ہوئے پریشان

لاک ڈاؤن ہے تو کیا ہوا،شادی نہیں رک سکتی، دولہا دلہن نے ماسک پہن کے کر لی شادی

کوئی بھوکا نہ سوئے، مودی کے احمد آباد گجرات کے مندروں میں مسلمانوں نے کیا راشن تقسیم

خواجہ سراؤں نے دوستی کے بہانے نشہ دے کر نوجوان کا عضو خاص کاٹ دیا

وزیراعظم عمران خان نے  قوم کے نام اپنے پیغام میں کہا کہ عیدالاضحیٰ آنے والی ہے میں سب سے اپیل کرتا ہوں کہ وہ نہ کریں جو عیدالفطر کے موقع پر کیا۔ بڑی عید پر وہ نہ کریں جو پچھلی عید پر کیا۔پچھلی عید پر ہم نے لاپرواہی کا مظاہرہ کیا اس بات کا خیال نہیں کیا گیا کہ یہ وائرس ایک جگہ لوگوں کے جمع ہونے سے زیادہ تیزی سے پھیلتا ہے۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ چونکہ ہم نے لاپرواہی کی اس لیے عید کے موقع پر بہت تیزی سے وائرس پھیلا نتیجتاً میں ہمارے ہسپتالوں اور فرنٹ لائن ورکرز پر دباؤ آیا اور بدقسمتی سے اموات میں اضافہ ہوا اور وائرس اپنے عروج پر پہنچا۔ عید کے بعد اسمارٹ لاک ڈاؤن اور دیگر اقدامات سے کورونا کیسز کی تعداد میں کمی ہوئی۔

 

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.