پنجاب بھر کے تھانوں میں نصب کیمرے ڈنگ ٹپاؤ نکلے

لاہور:سیف پنجاب تو دور کی بات سیف سٹی پر بھی عمل نہ ہوسکا .اطلاعات کے مطابق لاہور سمیت صوبہ بھر کے تھانوں میں نصب کیمرے وقت ٹپاو نکلے، یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ لاہورسمیت پنجاب بھر کے ایس ایچ اوز کے کمروں اورحوالات میں نصب کیمروں کابیک اپ ہی موجود نہیں۔

باغی ٹی وی ذرائع کے مطابق لاہورسمیت پنجاب بھرمیں عوامی شکایات کے حل کے لیے ایس ایچ اوزاور ملزمان کی مانیٹرنگ کے لیے حوالاتوں میں لگائے گئے کیمروں کا کسی بھی حادثے یا واقعہ کا آئی جی آفس کی جانب سے فوٹیج مانگنے پر بیک اپ ہی نہیں ہوتا ۔

یہ بھی معلوم ہوا کہ کیمروں کو متعلقہ ضلع کے سسٹم کیساتھ منسلک ہی نہیں کیا گیا، اس حوالے سے متعلقہ برانچ نے تمام ڈی پی اوزکو15 روزکا بیک اپ رکھنے کا مراسلہ جاری کردیا ہے۔آئی جی کے مراسلے میں تمام ڈی پی اوزکوہرپندرہ روزبعد کیمروں کے بیک اپ کی رپورٹ آئی جی آفس بھجوانے کا حکم دیا ہے۔

آئی جی پنجاب نے خبردار کیا ہے کہ کیمروں کا بیک اپ نہ ہونے پر متعلقہ افسرکیخلاف کارروائی ہوگی، ذرائع کے مطابق فوٹیج مانگنے پرپتہ چلا کہ کیمروں کا بیک اپ ہی نہیں رکھا گیا تھا، بیک اپ کے بغیر کیمروں کا مقصد پورانہیں ہوسکتا۔یاد رہے کہ اس سے پہلے بھی لاہور میں نصب کیمروں کے حوالے سے سکینڈل منظر عام ہوچکا ہے.

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.