fbpx

کیرئیر کے عروج پر گلوکاری کو خیرباد کہنے والے جنید جمشید کی 6 برسی

جنید جمیشد نوے کی دہائی کے مشہور و معروف گلوکار ہیں وہ اپنے کیرئیر کے عروج پرگلوکاری کو خیرباد کہہ کر تبلیغ کی راہ پر چل نکلے.انہوں نے جب گلوکاری کو ایک بار چھوڑ دیا تو پیچھے مڑ کر اس کیرئیر کی طرف نہ دیکھا. 7 دسمبر 2016 کی بد نصیب شام میں پی آئی اے کی فلائٹ مں بیٹھے جنید جمشید کو کیا پتہ تھا کہ اس کے بعد دنیا میں‌ ہی نہیں رہیں گے . یہ فلائٹ جب چترال سے اسلام آباد جا رہی تھی تو حویلیاں کے قریب گر کر تباہ ہوگیااس جہاز میں عملے کے پانچ ارکان سمیت تمام 48 افراد بھی موجود تھے جو کہ اس حادثے میں جاں بحق

ہوگئے تھے۔جنید جمشید کے چاہنے والے آج بھی ان کی اس طرح کی موت پر افسردہ ہیں . جنید جمشید جتنے اچھے گلوکار تھے اس سے کہیں زیادہ اچھے نعت خواں تھے. جنید جمشید نے اسی کی دہائی کے آواخر میں گلوکاری کا آغاز کیا ان کا گیت دل دل پاکستان نے کامیابی کے نئے ریکارڈز قائم کئے دیکھتے ہی دیکھتے ان کا شمار بہترین اور نمبر ون پاپ گلوکاروں میں ہونے لگا. جنید جمشید کو دنیا سے رخصت ہوئے چھ سال ہو چکے ہیں لیکن وہ آج بھی مداحوں کے دلوں میں زندہ ہیں اور زندہ رہیں گے.