fbpx

چینی کی قیمتوں کا تعین،عدالت نے کب تک مہلت دے دی ؟

لاہور ہائیکورٹ میں چینی کی قیمتوں میں اضافے کیخلاف شوگر ملز کی درخواستوں پر سماعت ہوئی

عدالت نے حکومت اور شوگر ملز مالکان کو 4بجے تک مشاورت کے لیے وقت دے دیا ،عدالت نے کہا کہ چیف سکرٹری آفس میں بیٹھیں اور فیصلہ کریں آفیسر مسنٹری آف انڈسٹری نے کہا کہ 2006 سے عدالتی حکم پر باقاعدہ قیمت کے تعین کا سسٹم بنایا,عدالت نے استفسار کیا کہ آپ نے اسٹیک ہولڈرز کو آن بورڈ لیا, حکام نے کہا کہ ان کی طرف سے کوئی باقاعدہ جواب نہیں آیا, عدالت نے کہا کہ یہ تو تیار ہیں آنے کے لیے , حکام نے کہا کہ ان کو کال کرتے ہیں کال نہیں اٹھاتے فقط 20 شوگر مل پر مشتمل بات کرنا چاہتے ہیں, عدالت نے کہا کہ کیا طریقہ ہے آپ ان کو بٹھا کر قیمت کا تعین سے متعلق بات کرلیں , آرٹیکل 18 کیمطابق شوگر ملز مالکان کا حق ہے عدالت سے رجوع کریں,
حکومت کو اختیار ہے قیمتوں کے تعین کا, آپ کاسٹ سے نیچے کریں گے تو آپ کو سبسڈی دینا پڑے گی, اگر آپ ان کو سنے بغیر کریں گے تو ان کا بھی حق یے بات سنی جائے , ان کو سنیں اور پھر باہمی مشاورت سے قیمتوں کا تعین کریں, رمضان آرہا ہے آپ کی قیمتوں کے تعین کی اتھارٹی کو چینلج کیا گیا ہے, اس میں کیا مسئلہ ہے کہ آپ بیٹھ کر بات کرلیں,

وکیل صوبائی حکومت نے کہا کہ ان کو بلوایا,اخبار میں اشتہار دیا مگر بات ہی نہیں سنتے, اسلام آباد ہائیکورٹ میں دونوں پارٹیوں کی رضامندی کیساتھ 70 روپے کی قیمت مقرر ہوئی, اور اب یہ 85 روپے میں فروخت کرنے پر رضامند نہیں, جس پر عدالت نے کہا کہ اہف بی آر کا ڈیٹا رکھ لیں اور دونوں پارٹیز بیٹھ کر باہمی مشاورت کرلیں, اس وقت ملک کا سب سے بڑا مسئلہ مہنگائی ہے, عدالت پروسیس پر عملدرآمد چاہتی ہے, وکیل شوگر مل نے کہا کہ جنرل خریدار کے لیے قیمیتوں کا تعین کررہے ہیں, لیکن آج تک حکومت نے کوئی ڈیٹا ہی نہیں بنایا, حکومت کو جنرل اور کمرشل خریداروں کے مسائل کو دیکھنا چاہیے, حکومت شوگر اٹھا کر کمرشل خریدار کو دے دیتی یے, عدالت نے کہا کہ آپ مشاورت کرکے آئیں عدالت اس کو دیکھے گی کہ قانون کیمطابق مشاورت ہوئی یانہیں, اس پر فیصلہ آج ہوگا 4بجے تک مشاورت کرکے آجائیں

ایڈوکیٹ جنرل پنجاب احمد اویس عدالت میں پیش ہوئے،سیکرٹری انڈسٹریز، کین کمشنر اور ایف بی آر کے نمائندے عدالت میں پیش ہوئے، جسٹس شاہد جمیل خان نے تاندلیانوالہ شوگر ملز سمیت دیگر کی درخواست پر سماعت کی

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.