کروناکے بعد ایک اور مرض بھی تباہی مچانے والا ، ڈبلیو ایچ او نے آگاہ کر دیا

کروناکے بعد ایک اور مرض بھی تباہی مچانے والا ، ڈبلیو ایچ او نے آگاہ کر دیا

باغی ٹی وی :ایک دوسری مرض اور وباء دنیا کو اپنی لپیٹ میں‌لے سکتا ہے .عالمی ادارہ صحت (ڈبلیو ایچ او) نے خبردار کیا ہے کہ کورونا وائرس کے دوران افریقہ میں ملیریا سے دگنی اموات کا خدشہ ہے۔

ڈبلیو ایچ او کے مطابق رواں سال کیڑے مار ادویات کی فراہمی میں رکاوٹوں کی وجہ سے مچھروں کے کاٹنے سے ملیریا پھیل سکتا ہے۔عالمی ادارہ صحت کا کہنا ہے کہ فوری اقدامات نہ کیے تو براعظم افریقہ میں ملیریا سے پچھلے سال کی نسبت دگنی اموات واقع ہو سکتی ہیں۔

ڈبلیو ایچ او افریقہ کے ڈائریکٹر نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ رواں سال ‘سب صحارا’ افریقہ میں ملیریا سے ساڑھے 7 لاکھ سے زیادہ اموات ہو سکتی ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ یہ 2000 کے بعد سب سے زیادہ اموات ہوں گی۔

عالمی ادارۂ صحت کے سربراہ ٹیڈروس نے خبردار کیا ہے کہ خسرہ اور پولیو ویکسین نہ لگائی گئیں تو یہ بیماریاں پھر سے سر اٹھا سکتی ہیں۔

ادھر بھارتی دہلی کے بابو جگجیون رام میموریل ہسپتال کے طبی عملے کے 14 اراکین میں کرونا وائرس کی تشخیص ہوئی جس کے بعد ہسپتال کو سیل کر دیا گیا، ساوتھ ایشین وائر کے مطابق 100 بستروں والا ملٹی اسپیشلیٹی ڈسٹرکٹ ہسپتال شمال مغربی ضلع میں جہانگیرپوری کے ای بلاک میں واقع ہے۔

جمعہ کے روز دہلی کی وزارت صحت نے اس بات کی تصدیق کی کہ ہسپتال کو سیل کر دیا گیا ہے،دہلی میں کرونا وائرس کے 2،376 کیسز سامنے آئے ہیں۔ جن میں 808 افراد صحتیاب ہونے کے بعد ہسپتال سے فارغ کردیا گیا جبکہ کرونا سے 50 ہلاکتیں ہو چکی ہیں.

بھارت میں کرونا وائرس کے مریضوں اور ہلاکتوں میں اضافہ دیکھنے میں آیا ہے

بھارتی وزارت صحت کے مطابق بھارتی ریاستوں مہاراشٹر، گجرات، مدھیہ پردیش اور راجدھانی دہلی میں کورونا وائرس سے مرنے والوں کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے اور ان چاروں ریاستوں میں مرنے والوں کی مجموعی تعداد 500 ہو گئی ہے جوبھارت میں کورونا وائرس سے ہونے والی کل اموات کا تقریبا 74 فیصد ہے

کرونا لاک ڈاؤن، گھر میں فاقے، ماں نے 5 بچوں کو تالاب میں پھینک دیا،سب کی ہوئی موت

کرونا میں مرد کو ہمبستری سے روکنا گناہ یا ثواب

 

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.