سپریم کورٹ کو کسی کاروبار میں نہیں پڑنا چاہیے،جسٹس اطہر من اللہ

0
38
supreme court pakistan

سپریم کورٹ میں منسٹری آف انٹیرئیر کوآپرییٹو ہاؤسنگ سوسائٹی کی زمین کیس کی سماعت ہوئی

جسٹس اطہر من اللہ نے ہاؤسنگ سوسائٹیز اداروں کے نام پر بنانے پر اظہار برہمی کیا،جسٹس اطہرمن اللہ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ کوآپریٹو ہاوسنگ سوسائٹی کا نام منسٹری کے نام پہ کیسے رکھا جا سکتا ہے؟ وکیل درخواست گزار نے عدالت میں کہا کہ ایسے تو سپریم کورٹ ہاوسنگ سوسائٹی بھی ہے،جسٹس امین الدین خان نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ "امپلائز” کو آپریٹیو ہاوسنگ سوسائٹی ہے، جسٹس اطہرمن اللہ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ میرے خیال میں سپریم کورٹ کا نام بھی ہاوسنگ سوسائٹی کیلئے استعمال نہیں ہونا چاہیے،سپریم کورٹ کو کسی کاروبار میں نہیں پڑنا چاہیے،نجی کاروبار میں منسٹری کا نام کیسے استعمال کیا گیا ہے؟

وکیل درخواست گزار نے کہا کہ اگر عدالت فیصلہ کر دے تو ہم ہاوسنگ سوسائٹی کا نام بھی بدل دیں گے، جسٹس سردار طارق نے کہا کہ ہاوسنگ سوسائٹی کے نام تبدیلی کا ذکر ہائیکورٹ میں ہوا ہی نہیں تو عدالت کیسے حکم دے؟ جسٹس امین الدین خان نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ سپریم کورٹ "ایمپلائز” کو آپریٹیو ہاوسنگ سوسائٹی ہے،سپریم کورٹ نے وزارت داخلہ کوآپریٹیو ہاوسنگ سوسائٹی کی درخواستیں خارج کر دیں

توہین رسالت کی مجرمہ خاتون کو سزائے موت سنا دی گئی

مدرسے کی طالبات نے خاتون معلمہ کو گلی میں مبینہ طور پر ذبح کر دیا

خواب دیکھا،استانی نے توہین مذہب کی، اسلئے ذبح کر دیا، ملزمہ طالبات کا بیان

جسٹس سردار طارق مسعود کی سربراہی میں3رکنی بینچ نے کیس کی سماعت کی ،عدالت نے منسٹری آف انٹیرئیر ہاوسنگ سوسائٹی کی جانب سے سرکاری کالج کی زمین کے قبضے کیخلاف فیصلہ دیا ،منسٹری آف انٹیرئیر ہاوسنگ سوسائٹی نے اسلام آباد ہائیکورٹ کا فیصلہ سپریم کورٹ میں چیلنج کر رکھا تھا

Leave a reply