fbpx

مفت تعلیم کے نام پر پرائیویٹ سکول کے مالک کا شہریوں سے فراڈ

لاہور : معیاری اور سستی تعلیم کے نام پر پرائیویٹ سکولوں کی طرف سے طالبعلموں سے فراڈ کا سلسلہ رکنے کا نام ہی نہیں لے رہا . تفصیلات کے مطابق لاہور کے ایک سکول کا مالک ندیم احمد بچوں کے والدین سے مبینہ طور پر ڈیڑھ، ڈیڑھ لاکھ روپے وصول کرکے امریکہ فرار ہوگیا، پیسے واپس نہ ملنے کیخلاف والدین نے شدید احتجاج کیا۔

ذرائع کے مطابق گڑھی شاہو میں واقع سینوک گرائمر سکول کے مالک ندیم احمد نے سینکڑوں والدین کو بچوں کو میٹرک تک مفت تعلیم دینے کا لالچ دیا اور مبینہ طور پر ڈیڑھ، ڈیڑھ لاکھ روپے رقم بٹور کر فرار ہوگیا۔ والدین کا کہنا ہے کہ ڈیڑھ لاکھ روپے قابل واپسی تھے اس کے باوجود ہر ماہ ان سے 8 ہزار روپے فیس وصول کی جاتی رہی۔ والدین کا کہنا ہے کہ بچوں کے مستقبل کیلئے انھیں یہ رقم ہر صورت واپس ملنی چاہیے۔

دوسری طرف سکول کی ہیڈ مسٹریس یاسمین شوکت کا کہنا ہے کہ والدین نے سکول کے مالک ندیم احمد کو فیسیں باہمی رضا مندی سے جمع کرائیں، اس میں سکول ملازمین کا کوئی قصور نہیں ہے۔

پولیس کے مطابق ساڑھے پانچ سو سے زائد والدین سے فیسوں کا فراڈ کرنے کے معاملے پر متعلقہ پولیس نے نوٹس لیتے ہوئے انکوائری شروع کردی ہے۔ پولیس کا کہنا ہے کہ انکوائری کرنے کے بعد ملزمان کیخلاف کارروائی کی جائے گی۔