fbpx

کوششوں کے باوجود بھی صرف 10 فیصد متاثرین تک پہنچے ہیں، فیصل ایدھی

کوششوں کے باوجود بھی صرف 10 فیصد متاثرین تک پہنچے ہیں، فیصل ایدھی
پی ڈی ایم اے کا کہنا ہے کہ ایمرجنسی بنیادوں پر ریسکیو کرنے اور امدادی سرگرمیاں جاری ہیں، سکھر میں پی ڈی ایم اے کا بیس کیمپ قائم کر دیا گیا پی ڈی ایم اے،انتظامیہ سمیت تمام ادارے اپنی کوشش کر رہے ہیں، ملک میں تاریخی سیلاب ہے،اس آفت کا مقابلہ سب کو ملکر کرناہوگا،

ایدھی فاؤنڈیشن کے سربراہ فیصل ایدھی کا کہنا ہے کہ پاکستان میں سیلاب سے ہرشخص متاثر ہوا،پاکستان میں 3 سے 5کروڑ افراد بارشوں سے متاثر ہیں، ہم زیادہ کوششوں کے باوجود بھی صرف 10 فیصد متاثرین تک پہنچے ہیں، صورتحال ایسی ہے کہ الیکٹرانک میڈیا کے ہاتھ سے بھی چیزیں نکل گئی ہیں،نوے فیصد افراد ابھی بھی ہماری امداد کے منتظر ہیں، دادو میں لوگ پھنسے ہوئے ہیں کہتے ہمیں یہیں تک کھانا پہنچا دیں،ہم ایمرجنسی ریلیف فنڈ میں بہت کچھ جمع کرارہے ہیں،سیلابی صورتحال سے تمام ہی لوگ واقف ہیں،مدادی کارروائیوں میں 2010 کے سیلاب جیسی مدد ملتی نظر نہیں آرہی کھانے پینے کی اشیا نایاب ہوگئی ہیں، خیبرپختونخوا میں دریا سے ایک علاقہ متاثر ہوا،لوگ میسج کرکے کھانے کا تقاضہ کر رہے ہیں، میرا بیٹا دادو میں ہے اسے میہڑ جانا ہے وہ قاضی آصف گاؤں تک نہیں جا پا رہا، حکومت 25 ہزار روپے زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچائے،انٹرنیشنل این جی او پر لگی پابندی کو ایک سال کے لیے ہٹا لیا جائے،

قبل ازیں مشیر داخلہ بلوچستان ضیا لانگو کا کہنا ہے کہ نصیر آباد ڈویژن کے علاوہ باقی اضلاع میں صورتحال بہتر ہورہی ہے،نصیر آباد ڈویژن کو آفت زدہ قرار دیا جاچکا ہے

پاک فوج نے فلڈ ریلیف ہیلپ لائن قائم کر دی،

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کانجو اور سوات کا دورہ کیا

وزیراعظم شہباز شریف نے چارسدہ میں سیلاب سے متاثرہ علاقوں کا دورہ کیا

متحدہ عرب امارات کے حکام کا آرمی چیف سے رابطہ،سیلاب زدگان کیلیے امداد بھجوانے کا اعلان

علاوہ ازیں ملک بھر میں سیلاب اور بارشوں مزید 19 افراد جاں بحق ہوئے،سیلاب اور بارشوں سے سندھ میں مزید 12افراد جاں بحق ہوئے،خیبرپختونخوامیں سیلاب اور بارشوں سے 4 افراد لقمہ اجل بنے این ڈی ایم اے کے مطابق سیلاب اور بارشوں سے بلوچستان میں جاں بحق افراد کی تعداد 3 ہوگئی،ملک بھر میں سیلاب اور بارشوں سے جاں بحق افراد کی تعداد ایک ہزار 208 ہوگئی ،سیلاب اور بارشوں سے سندھ میں432 افراد زندگی کی بازى ہارگئے