fbpx

ڈپٹی کمشنر ایبٹ آباد کی کمزور گرفت شہر بھر میں مہنگائی کا جن بوتل سے باہر

ڈپٹی کمشنر ایبٹ آباد دفتر تک محدود ہیں جس کی وجہ سے شہر بھر کی تاجر برادری کی جانب سے سبزی فروٹ کے ریٹ اپنی مرضی سے مقرر ہوتے ہیں آٹا چاول چینی دالیں گھی دودھ دہی سمیت دیگر اشیاء خورونوش کے ریٹ بھی من مانے وصول کئے جاتے ہیں بازار میں گوشت اور بیکری کی اشیاء کے ریٹ آسمان سے باتیں کر رہے ہیں ضلعی انتظامیہ کی جانب سے روزانہ کی بنیاد پر ریٹ لیسٹ تو سوشل میڈیا پر اپلوڈ تو کی جاتی ہے۔

مگر اس پر عمل درآمد نہیں کروایا جاتا محکمہ فوڈ اور ڈسٹرکٹ انتظامیہ کے افسران کی فوج صرف سوشل میڈیا پر فوٹو سیشن میں مصروف ہیں مگر عوام کو ریلیف دینے اور خود ساختہ مہنگائی کو کنٹرول کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہے ضلع ایبٹ آباد کی عوام نے وزیر اعلی کے پی کے اور چیف سیکرٹری سے اپیل کی ہے کہ ایبٹ آباد میں مہنگائی کو کنٹرول کرنے کے لئے نوٹس لیں اور ایبٹ آباد کے شہریوں کو ریلیف فراہم کریں کیونکہ ایبٹ آباد کے شہری بھی پاکستان اور کے پی کے کا حصہ ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.