fbpx

سیاسی جماعتوں کی فنڈنگ کیس میں تاخیر، ڈی جی لا کورپورٹ جمع کروانے کا حکم

سیاسی جماعتوں کی فنڈنگ کیس میں تاخیر، ڈی جی لا کورپورٹ جمع کروانے کا حکم

اسلام آباد ہائیکورٹ نے سیاسی جماعتوں کی فنڈنگ کیس میں تاخیر پر الیکشن کمیشن کیخلاف درخواست پر ڈی جی لا کو 10 روز میں رپورٹ جمع کرانے کا حکم دے دیا

اسلام آباد ہائیکورٹ میں سیاسی جماعتوں کی فنڈنگ کیس میں تاخیر پر الیکشن کمیشن کیخلاف درخواست پر سماعت ہوئی،ڈی جی لا الیکشن کمیشن نے پیشرفت رپورٹ جمع کرانے کیلئے مزید وقت مانگ لیا ڈی جی لا نے کہا کہ انتخابی معاملات کی وجہ سے رپورٹ فائنل نہیں کر سکا ،اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس عامر فاروق نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ احتساب سب کیلئے ایک جیسا ہونا چاہئے،عدالت نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ درخواست گزار کا موقف ہے پی ٹی آئی کیخلاف کیس میں جلدی دکھائی گئی،عدالت نے ڈی جی لا الیکشن کمیشن کو 10 روز میں رپورٹ جمع کرانے کا حکم دے دیا، بعد ازاں عدالت نے کیس کی سماعت 7 فروری تک ملتوی کردی ۔

عمران خان چوری کے مرتکب پارٹی سربراہی سے مستعفی ہونا چاہیے،عطا تارڑ

پی ڈی ایم اجلاس،عمران خان کے خلاف کارروائی سے متعلق غور

ممنوعہ فنڈنگ کیس،الیکشن کمیشن نے فیصلہ سنا دیا،تحریک انصاف "مجرم” قرار’

،عمرا ن خان لوگوں کو چور اور ڈاکو کہہ کے بلاتے تھے، فیصلے نے ثابت کر دیا، عمران خان کے ذاتی مفادات تھے

اکبر ایس بابر سچا اور عمران خان جھوٹا ثابت ہوگیا،چوھدری شجاعت

واضح رہے کہ تحریک انصاف نے ن لیگ اور پیپلز پارٹی سمیت دیگر جماعتوں کے فارن فنڈنگ کیس کے فیصلے جلد کرنے کے لئے عدالت میں درخواست دائرکر رکھی ہے، درخواست تحریک انصاف کے رہنما فرح حبیب نے دائر کی، اسلام آباد ہائیکورٹ میں دائر درخواست میں الیکشن کمیشن کو فریق بنایا گیا ہے، پی ٹی آئی کی درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ پی ٹی آئی کی طرح دیگر جماعتوں کے کیس سننے میں الیکشن کمیشن ناکام رہا پی ٹی آئی کی درخواست میں مزید کہا گیا کہ بنیادی حقوق کی خلاف ورزی ہو رہی ہے ،درخواست میں عدالت سے استدعا کی گئی ہے کہ جمہوریت کے تحفظ کیلئے پٹیشن میں اٹھائے گئے سوالات کا فیصلہ کیا جائے الیکشن کمیشن کو ہدایت کی جائے کہ دیگر جماعتوں کے ممنوعہ فنڈنگ کیسز کی روزانہ سماعت کی جائے