fbpx

دلیپ کمار وہ واحد انسان تھے جو ہندوستان اور پاکستان کو اکٹھا کرسکتے تھے

دلیپ کمار نے ناصرف برصغیر میں اپنی غیر معمولی اداکاری کے جوہر دکھائے بلکہ اس خطے کے ہندوؤں اور مسلمانوں کو اکٹھا کرنے میں بھی نمایاں کردار ادا کیا۔

باغی ٹی وی : سابق وزیر خارجہ، خورشید محمود قصوری کے مطابق دلیپ کمار نے دو دفعہ پاکستان کا دورہ کیا جبکہ وہ اپنے دورۂ بھارت پر اداکار سے ملنے ممبئی بھی گئے تھےباندرا میں اداکار کی رہائش گاہ کے دورے کے بعد قصوری سے پوچھا گیا کہ وہ دلیپ کمار کے گھر کیوں رُکے۔

جس پر خورشید محمود قصوری نے جواب دیتے ہوئے کہا کہ دلیپ کمار صاحب نے ہندوؤں اور مسلمانوں کو اکٹھا کرنے کے لیے دو دفعہ خفیہ طور پر پاکستان کا دورہ کیا، انہوں نے اپنی کتاب (نیدر اے ہاک اور نور اے ڈوو) میں اس بات کا انکشاف کیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا تھا کہ وہ واحد انسان ہیں جو ہندوستان اور پاکستان کو اکٹھا کرسکتے ہیں، انہوں نے دلیپ کمار کو اپنی کتاب تحفے میں دی اور دلیپ کمار نے دستخط کر کے انہیں اپنی سوانح حیات تحفہ میں دی، اُن کے نزدیک اس دستخط شدہ کتاب کی بڑی اہمیت ہوگی-

وزیراعظم پاکستان اور پی پی چئیرمین بلاول بھٹوکا دلیپ کمار کے انتقال پر دکھ و افسوس کا اظہار

دوسری جانب دوسری جانب بھارتی صدر رام ناتھ کووند نے بھی دلیپ کمار کے انتقال پر تعزیتی پیغام جاری کیا ہے۔

بھارتی صدر رام ناتھ کووند نے اپنے پیغام میں کہا کہ دلیپ صاحب بھارت کی تاریخ اپنےاندر سموئے ہوئے تھے دلیپ کمار بھارتی عوام کے دلوں میں ہمیشہ زندہ رہیں گے۔

واضح رہے کہ لیجنڈری اداکار یوسف خان المعروف دلیپ کمار 98 سال کی عُمر میں انتقال کر گئے ہیں۔