ڈاکٹر کو حفاظتی آلات کی عدم فراہمی کے حوالہ سے درخواست پر عدالت نے کیا جرمانہ

ڈاکٹر کو حفاظتی آلات کی عدم فراہمی کے حوالہ سے درخواست پر عدالت نے کیا جرمانہ
باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق لاہور ہائیکورٹ میں کورونا وائرس سے بچاوَ کے لیے ڈاکٹرز کو حفاظتی آلات کی عدم فراہمی کیخلاف کیس کی سماعت ہوئی

عدالت نے غیر ضروری درخواست دائر کرنے والے ڈاکٹرز کی درخواست جرمانے کیساتھ خارج کردی، عدالت نے کہا کہ محکمہ صحت کو بدنامی کا سبب بننے والےڈاکٹرز کیخلاف قانونی کارروائی کرنےکا اختیار ہے،

چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس محمد قاسم خان نے 5 صفحات پر مشتمل تحریری حکم جاری کیا، تحریری حکم میں کہا گیا کہ ڈاکٹر زوہیب سمیت دیگر نے بدنیتی کی بنیاد پر درخواست دائر کی، اگر محکمہ صحت کی بدنامی ہوئی ہے تو مجاز حکام درخواست گزار ڈاکٹرز کیخلاف کارروائی کر سکتے ہیں،ڈاکٹروں نے ٹھوس وجوہات کے بغیر سستی شہرت حاصل کرنے کی کوشش کی،

تحریری حکم میں مزید کہا گیا کہ کوئی شک نہیں کہ میڈیکل ایک معزز پیشہ ہے جس کا مقصد انسانیت کی فلاح ہے،کورونا کیخلاف فرنٹ لائن پر لڑنے والے ڈاکٹرز کو حفاظتی سامان سے متعلق سوچ سمجھ کر بیان دینا چاہیے،حکومت اس ان دیکھی وباء کیخلاف اپنے دستیاب وسائل کیساتھ نبرد آزما ہے،حکومتی اقدامات کے باوجود کوئی حکم جاری کرنا ناانصافی ہو گی،

تحریری حکم میں مزید کہا گیا کہ درخواست گزار ڈاکٹروں نے کورونا مریضوں کی وارڈز میں ڈیوٹی سے متعلق غلط بیانی کی،

صرف دو روپے لیکر مریضوں کا علاج کرنیوالا ڈاکٹر کرونا کے باعث چل بسا

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.