fbpx

دنیا کی کم عمر خاتون زارا دنیا کے گرد چکر لگاتے ہوئے سعودی عرب پہنچ گئیں

دنیا کے گرد سولو فلائٹ کے ذریعے چکر لگانے والی بلجیئم کی کم عمر خاتون پائلٹ سعودی عرب پہنچ گئی.

باغی ٹی وی : سعودی دارالحکومت ریاض پہنچنے پر سعودی حکام نے زارا کا استقبال کیا. بلجیئم سے تعلق رکھنے والی 19 سالہ زارا روتھر فورڈ دنیا کی کمسن پائلٹ ہونے کا اعزاز رکھتی ہے جو چھوٹے جہاز کے ذریعے سولو فلائٹ کرتے ہوئے دنیا کے گرد چکر لگانے کی مہم پہ ہے، زارا دنیا کے 57 ممالک کا وزٹ کرے گی.

19 سالہ زارا دنیا کا چکر لگانے کے مشن پر روانہ

زارا نے بلجیئم سے اٹھارہ اگست 2021 کو اپنے سفر کا آغاز کیا تھا اور ان کے سفر کا اختتام 13 جنوری 2022 کو واپس بلجیئم پہنچ کر ہوگا جس کے ساتھ ہی وہ 51 ہزار کلومیٹر کا سفر طے کرکے ورلڈ ریکارڈ بنانے میں بھی کامیاب ہوجائیں گی-

انفرادی پرواز کے ذریعے دنیا کے گرد چکر لگانے والی کم عمر ترین خاتون پائلٹ کا ریکارڈ قائم کرنے کی کوشش میں مصروف زارا ردرفورڈ جمعرات کے روز سعودی دارالحکومت کے کنگ خالد انٹرنیشنل ایئرپورٹ پہنچیں۔

زارا متحدہ عرب امارات سے سعودی عرب پہنچیں تو ان کا استقبال مملکت میں بیلجیم کی خاتون سفیر ڈومینک مینور نے کیا۔ اس موقع پر ریاض ایئرپورٹس کمپنی اور سعودی ایوی ایشن کلب کے متعدد ذمے داران بھی موجود تھے۔ زارا نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ "یہ پرواز میری توقعات سے بڑھ کر رہی جس کوبھلایا نہیں جا سکتا میں مملکت کے اوپر پرواز کرتے ہوئے شان دار مناظر سے لطف اندوز ہوئی۔ اس دوران میں ہر لمحہ میرے لیے غیر معمولی تجربے کا حامل تھا۔

ملتان سے جدہ جانیوالی پی آئی اے پروازو فنی خرابی کے باعث کراچی اتارلی گئی

سعودی عرب کا مقصد ہے کہ زارا ردرفورڈ کی میزبانی کے ذریعے ہوابازی کے سیکٹر میں خواتین کے کردار پر روشنی ڈالی جائے اس سلسلے میں سعودی ایوی ایشن کلب اور سعودی سول ایوی ایشن اتھارٹی کے بیچ رابطہ کاری کو عمل میں لایا گیا ہے سعودی عرب میں خواتین کو ہوابازی کے میدان میں با اختیار بنانے کی کوششیں جارہی ہیں اس مقصد کو ویژن 2030 پروگرام کے مطابق پورا کیا جا رہا ہے۔

زارا ردرفورڈ 2000ء میں بیلجیم میں پیدا ہوئیں۔ ان کے والد "سام” برطانوی فضائیہ کے ہواباز رہ چکے ہیں۔ زارا کی والدہ "پیاٹرس” کا تعلق بیلجیم سے ہے۔ وہ بھی ماضی میں ہوابازی کر چکی ہیں۔ گذشتہ برس اگست میں اپنے مشن کا آغاز کرنے والی زارا کو امید ہے کہ جنوری کے وسط تک وہ اپنا سفر مکمل کر لیں گی۔

زارا نے سفری مشن کا آغاز بیلجیم کےKortrijk-Wevelgem ہوائی اڈے سے کیا تھا۔ وہ اپنے ہلکے وزن کے Shark UL طیارے کے ساتھ مجموعی طور پر 51 ہزار کلو میٹر کا سفر طے کریں گی زارا کے پاس بیلجیم اور برطانیہ دونوں ممالک کی شہریت ہے زارا کے مطابق وہ انفرادی پرواز میں دنیا کے گرد چکر لگانے والی کم عمر ترین خاتون بننا چاہتی ہیں تا کہ ان کا نام "گینز ورلڈ ریکارڈز” میں درج ہو جائے۔

معیشت مضبوط اورملازمتوں کےمواقع پیداہورہے ہیں،وزیراعظم

زارا نے دنیا کے گرد چکر مکمل کرنے کے لیے سعودی عرب، میانمار، گرین لینڈ اور ہنڈراس سمیت کئی ممالک سے خصوصی اجازت لی ہے اپنے سفر میں ان کا طیارہ 5 براعظموں کے 52 ممالک میں اترے گا اس سفر کا مقصدخواتین پر زور دینا ہے کہ وہ سائنس و ٹیکنالوجی ، انیجیئنرنگ اور ریاضیات کی تعلیم حاصل کریں اور ہوابازی پر توجہ دیں اور بتا سکیں کہ لڑکیاں دنیا کے کسی بھی شعبے میں اپنے آپ کو منوانے کی صلاحیت رکھتی ہیں۔

اگر وہ تین ماہ کے اندر دنیا کے گرد چکر لگانے کا اعزاز حاصل کرلیتی ہیں تو وہ دنیا کی پہلی نوجوان خاتون ہوں گی جبکہ گزشتہ سال جولائی میں ہی 18 سالہ برطانوی لڑکے نے بھی دنیا کے گرد چکر لگانے کا مشن مکمل کیا تھا۔

مری سانحہ، غفلت کا ذمہ دار کون ہے؟ مبشر لقمان برس پڑے

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!