fbpx

فیس بک نے چہرے کی شناخت کا فیچر ختم کردیا

رازداری ختم ہونے کے خدشات کے پیش نظر فیس بک نے چہرے کی شناخت کا فیچر ختم کردیا۔

باغی ٹی وی : سماجی رابطوں کی ویب سائٹ فیس بک نے پرائیویسی شکایات کے سبب اپنا چہرے کی شناخت کا سسٹم ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور پہلے سے موجود کروڑوں افراد کی معلومات بھی ڈیلیٹ کر دی جائیں گی۔

فیس بک نے کہا کہ اس کی تمام مصنوعات میں استعمال ہونے والی چہرے کی شناخت کی ٹیکنالوجی کو "آنے والے ہفتوں میں” ہٹا دیا جائے گا غیرملکی میڈیا کے مطابق فیس بک کی جانب سے انتہائی اقدام حساس دستاویزات لیک ہونے کے بعد کیا گیا ہے۔

یہ نظام تصویر میں موجود لوگوں کی شناخت کیلئے استعمال ہوتا تھا۔ اس ٹول کو اپ لوڈ کی گئی تصاویر میں لوگوں کو ٹیگ کرنے میں مدد کرنے کے طور پر متعارف کرایا گیا تھا اس ٹول کو استعمال کرنے والے صارفین کے چہرے کے معلومات بھی فیس کے پاس جمع ہوتی تھیں۔

فیس بک کا کہنا ہے کہ اس ڈیٹا کو حذف کر دیا جائے گا اس اقدام سےایک ارب سے زیادہ لوگوں کے چہرے کی شناخت کے انفرادی ٹیمپلیٹس کو حذف کیا جائے گا یہ فیصلہ ہماری مصنوعات میں چہرے کی شناخت کے استعمال کو محدود کرنے کے لیے لیا گیا ہے اس ٹول کو ہٹانا ٹیکنالوجی کی تاریخ میں چہرے کی شناخت کے استعمال میں سب سے بڑی تبدیلیوں میں سے ایک کی نمائندگی کرے گا۔

فیس بک نے کہا کہ یہ فیصلہ’’مجموعی طور پر اس ٹیکنالوجی کے استعمال کے بارے میں بڑھتے ہوئے خدشات” کی وجہ سے کیا ہے، تاہم کمپنی کے اندر چہرے کی شناخت کی ٹیکنالوجی پر کام جاری رہے گا-

واضح رہے کہ بند کیے گئے فیچر سے صارفین کی تصاویر میں نظر آنے والے افراد کی شناخت خود بخود ممکن تھی۔