ایف بی آر نے رواں مالی سال کتنا ریوینیو وصول کیا ، اعدادو وشمار جاری

ایف بی آر نے رواں مالی سال کتنا ریوینیو وصول کیا ، اعدادو وشمار جاری

باغی ٹی وی : ایف بی آر نے رواں مالی سال جولائی تاا اکتوبر 1337ارب روپے کانیٹ ریوینیو حاصل کیا ہےجبکہ پچھلے سال ان چار ماہ میں 1288 ارب رو پےنیٹ ریونیو حاصل کیا گیاتھا۔ انکم ٹیکس کی مد میں 470ارب روپے حاصل ہوئے۔ سیلز ٹیکس سے حاصل کردہ ریونیو643 ارب، فیڈرل ایکسائز ڈیوٹی 81 ارب اور کسٹمز ڈیوٹی 206 ارب رہا۔

ایف بی آر نےمالی سال کے پہلے چار ماہ میں گراس ریونیو 1400ارب روپےاکھٹا کیا ہے جو کہ پچھلے مالی سال کے پہلے چار ماہ میں1323ارب روپے تھا ۔ ماہ اکتوبر میں محاصل کی مد میں 333ارب روپے حاصل ہوئے جو کہ پچھلے سال 325 ارب روپے تھے۔

رواں مالی سال جولائی تا اکتوبر128ارب روپے کے ریفنڈز جاری ہوئے ہیں جبکہ پچھلے سال جاری کردہ ریفنڈز 52 ارب روپے کے تھے۔ماہ اکتوبر میں 15 ارب کے ریفنڈز جاری ہوئے ہیں جو کہ پچھلے سال اکتوبر میں 4.5 ارب تھے۔

ریفنڈز میں اضافہ کے باوجود ایف بی آر نےاس سال اکتوبر میں پچھلے سال اکتوبر کے محاصل کے مقابلہ میں زائد ریونیو حاصل کیا ہے.مقامی وصولیوں میں 13 فیصد اضافہ حاصل ہوا ہے جو کہ ٹیکس گزاروں کا حکومت کے ریوینیو اقدامات پر اعتماد کی عکاسی بھی کرتا ہے۔
رواں مالی سال کے پہلے چار ماہ میں سمگل شدہ اشیاء جن کی مالیت 21.48 ارب روپے ہے ضبط کی گئی ہیں جبکہ پچھلے سال پہلے چار ماہ میں 13.40 ارب روپے مالیت کی اشیاء ضبط ہوئی تھی۔رواں ٹیکس سال تاجروں کی آسانی کے لئے انکم ٹیکس گوشوارے نہایت آسان اور ایک صفحہ پر مشتمل متعارف کرائے گئے ہیں۔
مزید براں تاجروں اور تنخواہ دار طبقہ کے لئےاردو اور علاقائی زبانوں میں بھی ٹیکس گوشوارے اپلوڈ کر دیئے گئے ہیں۔ ایف بی آر نے ٹیکس گزاروں سے اپیل کی ہے کہ وہ ان سہولیات سے فائدہ اٹھائیں اور اپنے سالانہ انکم ٹیکس گوشوارے 8 دسمبر 2020 تک جمع کرالیں۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.