fbpx

ڈی جی خان:پولیس کی بے بسی یا کچھ اور، ایف آئی آر کے باوجود قاتل کو گرفتار نہ کر سکی

ڈی جی خان: ایف آئی آر کے باوجود پولیس قاتل کو پکڑنے میں ناکام-

باغی ٹی وی : تفصیلات کے مطابق دلاور حسین20سالہ کا مجرمانہ قتل شہر ڈیرہ غازی خان تونسہ روڈ دری پیر عادل میں ہوا تھانہ کوٹ مبارک میں ایف آئی آر کے باوجود تیسرے دن بھی قاتل کھلے عام گھوم رہا ہےاور کہتا ہے میں فلاں سردار کا ملازم ہوں قاتل پر 302 کا مقدمہ درج کیا جا چکا ہے –

لڑکی کی شادی دوسری جگہ طے ہونے پر ناکام عاشق نے کیا گھناؤنا کام

محکمہ واٹر سپلائی سکیم ڈی جی خان میں ٹیوب ویل آپریٹر فدا حسین نے ایف آئی آر میں کہا کہ وہ 22 نومبر کو شام 5:15 بجے پسرم دلاور حسین ،غلام اکبر اور محمد علی بھی اپنے ذاتی کام کے سلسلہ میں آئے ہوئے تھے کہ وہاں ملزم نوید آیا جس کے ہاتھ میں پسٹل تھا للکار کر کہا کہ دلاور کو زندہ نہیں چھوڑوں گا اور آتے ہیں اس پر یکے بعد دیگرے 3 سے 4 فائر کئے جو اسے سینے ،کمر ، بائیں بازو اور جسم کے مختلف ھصوں پر لگے –

پارلیمنٹ ہاؤس کے باہر ایسا کام ہونے لگا کہ اراکین دیکھتے ہی رہ گئے

مدعی فدا حسین نے ایف آئی آر میں کہا کہ جب میں اور وہاں موجود سیگر لوگ مانہیں پکڑنے کے آگے بڑھے تو ملزم نے دھمکی دی نزدیک آئے تو جان کی خیر نہ ہو گی جس پر ہم خوف کی وجہ سے نزدیک نہ گئے وجہ عناد یہ ہے کہ قبل ازیں ملزم نے میرے سالہ غلام اکبر کو فائر مار کر شدید مضروب کیا تھا جس کا مقدمہ تھانہ میں درج ہے راضی نامی کے لئے دباؤ دے رہا تھا پسرم کے ساتھ اسی وجہ ست اس کی تکرار ہوئی تھی آج ملزم نوید نے پسرم دلاور کو فائر مار کر شدید زخمی کیا ہے دلاور زخموں کی تاب نہ لا کر موقع پر زخمی ہو گیا تاہم ملزم کے خلاف کاروائی کی جائے-

یہ ایف آئی آر رواں ماہ 22 تاریخ کو درج کروائی گئی لیکن تاحال پولیس نے ملزم کو گرفتار نہیں کیا ملزم سرعام گھوم رہا ہے-

بھائی کی گرفتاری کے بعد تاجر کے ساتھ گھناؤنا کام کرنیوالا ملزم گرفتار

Facebook Notice for EU! You need to login to view and post FB Comments!