فن لینڈ کلین گرین پروجیکٹ کیلئے تکنیکی امداد فراہم کرے گا، ملک امین اسلم

وزیر اعظم کے مشیر برائے موسمیاتی تبدیلی ملک امین اسلم نے کہا ہے کہ 10 بلین ٹری سونامی منصوبہ عمران خان کو عالمی رہنماؤں کی فہرست میں ممتاز کرنے کیلئے کافی ہے کیوںکہ 10 بلین ٹری سونامی منصوبہ کے اثرات عالمی ہونگے جبکہ پاکستان موسمیاتی تغیرات سے نمٹنے کی کاوشیں کرنے والے ممالک میں سر فہرست ہے۔ پاکستان کا ہدف صفر کچرا کے اصول پر مبنی سرکلر اکانومی کا قیام ہے جس کا آغاز اسلام آباد سے بہت جلد کیا جائے گا۔ اس سلسلے میں فن لینڈ کی ایک کمپنی تکنیکی معاونت بھی کر رہی ہے۔

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق ان خیالات کا اظہار انہوں نے فن لینڈ کے سفیر سے ایک ملاقات میں کیا۔ فن لینڈ کے سفیر جناب ہیری کامارینن نے مشیر برائے موسمیاتی تبدیلی سے ان کے دفتر میں ملاقات کی اور پاکستان اور فن لینڈ کے مابین تعاون کے وسیع امکانات پر تبادلہ خیال کیا۔ سفیر نے بتایا کہ ان کی موجودہ حکومت موسمیاتی تبدیلیوں سے متعلق بہت سنجیدہ ہے اور اس ضمن میں پوری یورپی یونین میں موسمیاتی تغیرات کے حوالے سے کلیدی کردار ادا کررہی ہے جس کے نتائج اسی سال کے اواخر میں واضح ہو جائیں گے۔ یورپی یونین سے باہر پاکستان پہلا ملک ہے جس کے ساتھ فن لینڈ نے موسمیاتی تغیرات کے ایجنڈے پر مشاورت کی ہے۔

انہوں نے وفاقی وزیر کو ماحولیاتی آلودگی کی روک تھام اور جنگلات کے فروغ کے حوالے سے فِنِش ٹیکنالوجی اور اہم ایجادات پر روشنی ڈالی۔ انہوں نے پیپٹک فائبر نامی مادہ سے تیار کردہ شاپنگ بیگ سے وفاقی وزیر کو روشناس کراتے ہوئے کہا کہ یہ تھیلی روائتی پلاسٹک کی تھیلی کی جگہ متعارف کرائی گئی ہے جو سو فیصد حیاتیاتی مواد سے تیار کردہ ہے اور بائیو ڈی گریڈ ایبل بھی ہے۔ انہوں نے نباتاتی مادہ سیلولوز سے تیار کردہ کاٹن سے متعلق بھی وفاقی وزیر کو آگاہ کیا۔

وفاقی وزیر نے فن لینڈ کی کامیابیوں پر مسرت کا اظہار کیا اور فِنِش ماڈل سے استفادہ کرنے کی خواہش کا اظہار کیا۔ انہوں نے بتایا کہ ترقی پذیر ممالک میں پاکستان واحد ملک ہے جو ایک ارب ڈالر کی خطیر رقم سے 10 ارب درخت لگانے کا منصوبہ رکھتا ہے۔ انہوں نے ایکو سسٹم ریسٹوریشن فنڈ اور کلین گرین منصوبہ سے بھی آگاہ کیا۔ فن لینڈ کے سفیر نے پاکستانی حکومت کے حالیہ اقدامات کی تعریف کی اور دونوں ممالک کے مابین تعاون مزید بڑھانے کی ضرورت پرزور دیا۔ انہوں نے بتایا کہ 2035 تک فن لینڈ کاربن نیوٹرل ہونے کا ہدف حاصل کرنے میں کامیاب ہو جائے گا۔ یاد رہے کہ رواں سال اکتوبر کے پہلے ہفتے میں پاکستانی ماہرین جنگلات و موسمیاتی تغیرات کا ایک وفد فن لینڈ کا دورہ کرے گا۔
محمد اویس

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.