پانچ فیصد بول دیا،چھپنے کی جگہ نہیں ملنی،جنرل باجوہ تپ گئے،28سالہ ناجائز بیٹی

0
48

لاہور:عمران خان اور ریٹائرڈ جنرل باجوہ کے درمیان معاذآرائی بڑھتی جارہی ہے ، اس حوالے سے سنیئرصحافی کالم نگار جاوید چوہدری نے اپنے کالم میں حیرت انگیز انکشافات کیے ہیں، ان کا کہنا ہےکہ ان کی اطلاعات کے مطابق سابق ریٹائرڈ جنرل باجوہ کا کہنا ہےکہ اگرانہوں نے پانچ فیصد بھی کچھ بتادیا تو ان کےمخالفین کی آنکھیں کھل جائیں گی، جاوید چوہدری کی اس بات کو آگے بڑھاتے ہوئے سینیئر صحافی مبشرلقمان نے کہاکہ جنرل صاحب 5 فیصد کی بات کرتےہیں میں کہتا ہوں کہ اگر انہوں دو فیصد بھی بتا دیا تو بات کہیں سے کہیں تک پہنچ جائے گی ، ان کا یہ بھی کہنا تھا کہ عرب ممالک ہم سے ناراض اسلیے ہیں‌کہ ہم نے ان کی طرف سے دیئے گئے تحائف ہی بیچ ڈالے ، یہ باتیں کرتا ہے صلح کروانے کی کون اس کی بات سنتا ہے ،ابھی تو ہیکر بتا رہا ہےکہ بہت کچھ آنے والا ہے ، پتہ نہیں کہ کیا کیا چیزیں پیش کی جائیں گی

عمران کے بلاول بھٹو سےمتعلق ایک بیان پر مبشرلقمان کا کہنا تھا کہ عمران خان کا یہ کہنا کہ بلاول بھٹو اور آصف علی زرداری کو پاکستان کی سلامتی کا اسٹیک ہولڈر بنادیا گیا ہے، اس پر ان کا کہنا تھا کہ جس شخص کے دورحکومت میں پاکستان کو مسائل سے دوچار ہونا پڑا آج وہ یہ سبق دے گا کہ سیکورٹی کا معاملہ ہے، اس شخص نے عرب دنیا کی گھڑیاں بیچ دیں ، سعودی عرب اس لیے ناراض ہے کہ ہم کبھی ایران کے ساتھ کبھی کسی اور کے ساتھ ، چین سی پیک بند کروانے کے معاملے پر ناراض ، ایران بھی ناراض اور یہ اپنی کوتاہیوں کا مورود الزام دوسروں کو ٹھہراتا ہے ،یہ کہتا ہے کہ میں ایران اور سعودی عرب کی صلح کرواتا ہوں اسے کون پوچھتا ہے محمد بن سلمان کو ناراض کیا اس نے مجبورا طیارہ اور منگوایا اور پھر واپس چلا گیا،

ایک سوال کے جواب میں مبشرلقمان کا کہنا تھا کہ بلاول بھٹو کی خارجہ پالیسی بڑی متوازن ہے ، اس نے مودی کی آنکھوں میں آنکھیں ڈال کر باتیں کی ہیں ، وہ پاکستان کا بہتر انداز سے کیس پیش کررہا ہے ،ان کایہ بھی کہنا تھاکہ بلاول نے نا کردار کشی کی اور نہ غلط زبان استعمال کی اورپاکستان کی بہترین انداز سے وکالت بھی کی،ان کا یہ بھی کہنا تھاکہ عمران خان نے اقوام متحدہ کے فورم پر مسئلہ کشمیر اٹھایا مگرپھراس مسئلے کے حل کے لیے کچھ نہ کرسکا ،

پاک فوج کی موجودہ قیادت کے حوالے سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے مبشرلقمان کا کہنا تھاکہ ایسی اطلاعات ہیں کہ عمران خان نے پارتی رہنماوں اور کارکنوں کو سختی سے ہدایت کی ہے کہ وہ موجودہ پاک فوج کی قیادت کے‌خلاف کسی قسم کا بھی رویہ اختیار نہ کریں‌،ان کا کہنا تھا کہ یہی کام اگر جنرل باجوہ کے دور میں ہوتا تو آج یہ صورت بہتر ہوتی

الیکشن کمیشن کے حوالے سے ایک سوال کے جواب میں جس میں الیکشن کمیشن کی وجہ سے سیاستدانوں سے کہا ہے کہ وہ دسمبرکے آخر تک اپنے گوشوارے اور ڈاکومنٹس بھیج دیں ، اس کا جواب دیتے ہوئے انکا کہنا تھا کہ عمرا ن خان ٹیریان کو تو نہیں بتائے گا، پہلے اس نے کون سا بتایا ہے ، پنجاب اسمبلی میں اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر کےخلاف عدم اعتماد کے حوالےسے ان کا کہنا تھاکہ ابھی تک نو دس لوگ ملک سے باہر ہیں اور وہ فون بھی نہیں اٹھا رہے، پھر اسپیکر اور ڈپٹی اسپیکر کے متعلق ووٹنگ بھی خفیہ ہوتی ہے ، کس پر الزام لگائیں گےکہ فلاں نے ووٹ نہیں دیا ، قومی اسمبلی میں پی ٹی آئی کے استعفوں کے حوالے سے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ یہ پی ٹی آئی والے ایم این ایز جھوٹے ہیں ،نافق ہیں، مراعات لے رہےہیں اور الزام دوسروں پر لگا رہے ہیں، اور الزام اسپیکر پر لگارہےہیں

ان کا ایک سوال کے جواب میں کہناتھا کہ اس ملک میں ہرکوئی کرپٹ ہے، ہرکوئی داولگا رہا ہے ، یہی حال حکمرانوں کا ہے ، حکمران بھی اپنی مرضی سے لوگوں کو لگا رہے ہیں اور ہٹا رہے ہیں، اس ملک میں معاملات ویسے ہی بہت بگڑ چکے ہیں ،ان کا یہ بھی کہنا تھاکہ جب کوئی پارتی بدلتا ہے اس کو لوٹا کہتےہیں ، پارٹی بدلنا جرم ہے تو قائد اعظم نے بھی پارٹی بدلی ہے ، علیم خان سے چوہدری پرویز الہی کی ملاقات کے حوالے سے انکا کہنا تھا کہ پنجاب اسمبلی میں نمبرز گیم کا معاملہ ہے اور علیم خان بہتر کردار ادا کرسکتےہیں

پاکستان میں سابق وزرائے اعظم قتل ہوگئے مگر آج تک ان کے قاتل نہیں پکڑے گئے ، بے نظیر قتل ہوگئیں یہ خلاپورا نہیں ہوسکتا ، ہمارے ہاں قاتل نہیں پکڑے جاتے ،یورپ میں اگرکوئی قتل ہوجائے تو وہ اس کی تہہ تک جاتے ہیں ، اسد عمرکے ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے مبشرلقمان نے کہا کہ اسد عمر غلط بیانی کررہےہیں، مولانا طارق جمیل کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ ان کو تیسری بار ہارٹ اٹیک ہوا ہے اللہ تعالیٰ ان کو صحت دے

Leave a reply