غریب عوام کھانے پینے کو بھی ترسنے لگی

قصور
دیگر شہروں کی طرح ضلع قصور میں بھی آٹے کا بحران شروع ،زندگی بچانے والی ادویات کی قیمتیں آسمان پر ،دیگر ضروریات زندگی ،کھانے پینے کی اشیاء خوردونوش ،سبزیوں، دودھ دہی، دالوں، آٹے، پھلوں،چینی، چائے پتی کی قیمتوں میں عدم استحکام اور غریب کی پہنچ سے دور کھانے پینے کی کوئی بھی اشیاء سرکاری نرخوں پر ملنا نایاب ہو چکا غریب عوام زندگی کے عذاب میں مبتلا

تفصیلات کے مطابق دیگر شہروں کی طرح ضلع قصور میں بھی آٹے کا بہران شدت اختیار کرنے لگا، زندگی بچانے والی ادویات کی قیمتیں راتوں رات انسانوں کی پہنچ سے دور ہو کر آسمان پر پہنچ گئئ ہیں اسی طرح دیگر ضروریات زندگی کی کھانے پینے کی تمام تر اشیاء سبزی، دالیں، دودھ دہی، چینی، چائے پتی، پھلوں کی قیمتوں میں آئے دن عدم استحکام اور مسلسل اضافے کے باعث دن بدن قیمتیں آسمان کو چھونے لگیں پیاز، ٹماٹر، لہسن ، ادرک، لیمن دیگر مثالہ جات، کی قیمتوں میں بے تحاشہ اضافہ سے غریب کی قوت خرید سے باہر ہوگیا ہے ہر دوکاندار اور ریڑھی بان مارکیٹ کمیٹی کی نام نہاد سرکاری لسٹ کونظر اندز کر کے من مانی قیمتں وصول کررہا ہے مارکیٹ عملہ کی ڈیوٹی غفلت سے موسمی سبزیاں،پھل بھی غریب کی دسترس سے دور ہوگئیں ہیں یومیہ دیہاڈیدار مزدور اپنے بچوں کو دال روٹی مہیا کرنے میں ناکام نظر آتے ہیں یہی وجہ ہے کہ غریب آدمی کے مسائل مسلسل بڑھ رہے ہیں جسکی وجہ سے آشیاء خوردونوش کی قیمتوں میں مسلسل اضافہ ہوتا جا رہا ھے۔بے بس مجبور عوام مہنگی داموں خریدنے پر مجبور ہیں "صحافتی” سروے پر متاثرین شہریوں، عوامی، فلاحی، سماجی سربراہان، سول سوسائٹی حلقوں، ڈسڑکٹ بار کے سینئر ووکلا نے حکام بالا، ڈپٹی کمشنر، اسسٹنٹ کمشنرز، ڈیوٹی مجسٹریٹس سے مطالبہ کیا ہے کہ فوری نوٹس لیکر خود ساختہ مہنگائی کو روکا جائے اور سرکاری نرخوں پر سبزیاں فروخت نہ کرنے والے دوکانداروں کے خلاف سخت سے کاروائی عمل میں لائی جائے تاکہ غریب عوام کو بھی جینے کا بنیادی حق میسر ہو سکے

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.