fbpx

عازمین میدان عرفات میں جمع ،مغفرت کی طلبی اور دعاوں میں مصروف

حج کا رکن اعظم وقوف عرفہ آج ادا کیا جائے گا

عازمین حج نے رات منیٰ میں قیام کیا اور نماز فجر کے بعد میدان عرفات روانہ ہوگئے 10 لاکھ سے زائد عازمین آج حج اکبر کی سعادت حاصل کریں گے، خطبہ حج پاکستانی وقت کے مطابق 1 بجکر 40 منٹ پر دیا جائے گا ،عازمین حج میدان عرفات میں جمع ہو رہے ہیں اور مغفرت کی طلبی سمیت دعاوں میں مصروف ہیں ، نو ذو الحج کو مقام عرفات کی حدود میں ٹھہرنا حج کا اہم ترین رکن ہے جس کے بغیر حج ہوتا ہی نہیں حدود میں وقف لازم ہے بلکہ فرض ہے چاہے مختصر وقت کیلئے کیوں نہ ہو۔ویسے مغرب کی اذان تک بیٹھنا مسنون ہے ظہر و عصر وہیں پڑھیں گے

ڈاکٹر محمد بن عبدالکریم العیسیٰ آج 9 ذوالحجہ کو عرفات کی مسجد النمرۃ میں حج کا خطبہ دیں گے ،اذان مغرب سے قبل میدان عرفات سے مزدلفہ روانہ ہوجائیں گے مزدلفہ میں عازمین حج مغرب اور عشا کی نمازیں ایک ساتھ ادا کریں گے عازمین مزدلفہ میں رات قیام اور رمی کے لیے کنکریاں جمع کریں گے عازمین نماز فجر کے بعد رمی بڑے شیطان کو کنکریاں مارنے جمرات جائیں گے عازمین رمی کے بعد قربانی کریں گے اور پھر حلق کروا کے احرام اتاریں گے

مناسک حج کا آغاز جمعرات کو ہوا تھا،جمعرات کو لاکھوں زائرین نے مسجد الحرام میں خانہ کعبہ کا طواف کیا ،حاجی حضرات 10، 11 ، 12 اور 13 ذی الحجہ کو بھی منٰی میں رہیں گے بیشتر حاجی 12 ذی الحجہ کو منیٰ سے نکل جائیں گے ایک تہائی کے لگ بھگ باقی ماندہ حاجی 13 ذی الحجہ کو منی سے رخصت ہوں گے

سعودی حکومت نے حاجیوں کے لئے وسیع و عریض انتظامات کر رکھے ہیں، موبائل ڈسپنسریاں بھی موجود ہیں، گائیڈز بھی موجود ہیں، سعودی حکومت کے شاندار انتظامات کی وجہ سے حج پر جانیوالے کو کسی قسم کی دشواری کا سامنا نہیں کرنا پڑ رہا، سعودی عرب کی وزارت صحت کے مطابق 25,000 سے زائد ہیلتھ ورکرز نے مقدس مقامات پر عازمین حج کو صحت کی خدمات فراہم کرنے میں حصہ لیا ۔ یہ ہیلتھ ورکر 13 اسپتالوں میں تعینات ہیں جہاں 4,654 داخل مریضوں کے بستر، 1,080 انتہائی نگہداشت کے بستر اور 238 ہیٹ اسٹروک کے مریضوں کے لیے ہیٹ اسٹریس بیڈ مختص کیے گئے