ہائی کورٹ حملے میں ملوث 21 وکلا کے خلاف کارروائی کیس کا تحریری حکمنامہ جاری

ہائی کورٹ حملے میں ملوث 21 وکلا کے خلاف کارروائی کیس کا تحریری حکمنامہ جاری

باغی ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق ہائی کورٹ حملے میں ملوث 21 وکلا کے خلاف مس کنڈکٹ کی کارروائی کیس کا تحریری حکمنامہ جاری کر دیا گیا

اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ کی سربراہی میں 3 رکنی بینچ نے حکمنامہ جاری کیا ،اسلام آباد ہائی کورٹ نے ہائی کورٹ حملے میں ملوث وکلا کو نوٹسز جاری کردئیے ،تحریری حکمنامے میں کہا گیا کہ ملوث گرفتار وکلا کے خلاف عدالتی نوٹسز سپرنٹنڈنٹ اڈیالہ جیل کو بھیجے جائیں،آئندہ سماعت سے پہلے تمام فریقین عدالت میں تحریری طور پر جواب جمع کریں، اسکروٹنی کمیٹی نے ہائی کورٹ حملے میں ملوث 150 وکلاکی نشاہدہی کی ہیں،

تحریری حکمنامے میں کہا گیا کہ کمیٹی کی نشاندہی پر 21 وکلا کے خلاف مس کنڈکٹ پر کارروائی کا آغاز کیا گیا، 8فروری کو کچھ وکلا نے اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس بلاک پر حملہ کیا تھا، وکلا نے ہائی کورٹ میں پر حملے کے دوران چیف جسٹس بلاک میں توڑ پھوڑ کی تھی،وکلا کی جانب سے چیف جسٹس سمیت تمام ججز کو 4 گھنٹے تک محصور رکھا گیا، ہائی کورٹ پر حملے کے دوران سائلین کو حصول انصاف سے دور رکھا گیا،

تحریری حکمنامے میں کہا گیا کہ پاکستان بار اور اسلام آباد بار کونسل نے ہائی کورٹ پر حملے کی مذمت کی، پاکستان بار کونسل نے حملے میں ملوث وکلا کے خلاف کارروائی کی یقین دہانی کرائی ہائی کورٹ حملے میں ملوث وکلاکے نشاندہی بارز خو دکریں گے، کیس پر مزید سماعت 25 فروری کو کی جائیگی،

اسلام آباد ہائیکورٹ میں سیکورٹی سخت،رینجرزتعینات،حملہ وکلاء کو عدالت نے کہاں بھجوا دیا؟

باقی یہ رہ گیا تھا کہ وکلا آئیں اور مجھے قتل کر دیں میں اسکے لیے تیار تھا،چیف جسٹس اطہر من اللہ

بے لگام وکلا نے مجھے زبردستی "کہاں” لے جانے کی کوشش کی، چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ

اسلام آباد ہائیکورٹ حملے کے بعد سیکیورٹی مزید بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا ہے،اسلام آباد ہائیکورٹ نے وزارت داخلہ کو خط لکھ دیا ترجمان ہائیکورٹ کا کہنا ہے کہ اسلام آباد ہائیکورٹ میں رینجرز کی مزید 2 ہزارنفری طلب کی گئی ہے ،

واضح رہے کہ اسلام آباد ہائیکورٹ نے  سیکٹر ایچ ایٹ میں تجاوزات کیخلاف شہری کی درخواست سماعت کیلئے منظور کی تھی اور تمام تجاوزات گرانے کا حکم دیا تھا۔ چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ کی سربراہی میں لارجر بینچ نے تجاوزات اور غیر قانونی تعمیرات کے خلاف بڑا فیصلہ دیا تھا ،عدالت نے اسلام آباد کچہری میں تمام غیرقانونی تعمیرات اور غیر قانونی وکلاء چیمبرز گرانے کا حکم  دیا ۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.